Tuesday , June 27 2017
Home / ہندوستان / گاندھی جی کے تین بندروں کی نقل کی چوری کے بعد

گاندھی جی کے تین بندروں کی نقل کی چوری کے بعد

سابرمتی آشرم کے تمام حصوں میں سی سی ٹی وی کیمرے
احمد آباد 6مارچ (سیاست ڈاٹ کام)بابائے قوم مہاتما گاندھی کے احمدآباد واقع تاریخی سابرمتی آشرم سے ان سے منسلک تین بندروں والی مشہور مورتی کی نقل چوری ہونے کے پیش نظر پورے آشرم کو سی سی ٹی وی کیمرے کے دائرے میں لانے پر غور کیا جا رہا ہے ۔یہاں سابرمتی دریا کے کنارے پر واقع اس آشرم کو مہاتما گاندھی نے جنوبی افریقہ سے واپسی پرقائم کیا تھا اور وہ یہاں 1933 تک رہے تھے جس کے دوران تحریک آزادی سے متعلق متعدد تاریخی فیصلے بھی یہیں کئے گئے تھے ۔ برا نہیں بولنے ، سننے اور دیکھنے کاسبق دینے والی مذکورہ مورتی کو ایک جاپانی بدھ مت راہب نے گاندھی جی کو پیش کیا تھا۔یہ آشرم اس سال اپنے قیام کی صدی منائے گا۔ آشرم تحفظ کے لئے بنے ٹرسٹ کے ڈائرکٹر اور ممتاز گاندھیائی تردیب سھرد نے آج یواین آئی کو بتایا کہ تقریباً دس دن قبل آشرم میں رکھی تین بندروں کی نقل چوری ہو گئی تھی تاہم اصل مورتی دہلی کے کرافٹ میوزیم میں محفوظ ہے ۔ آشرم میں بھی نمائش کے لئے رکھی گئی زیادہ تر چیزیں بنیادی اشیاء کی نقل ہی ہیں، اور اصلی اشیاء کو الیکٹرانک سیکورٹی میں رکھا گیا ہے ۔انہوں نے بتایا کہ اب آشرم میں ہر جگہ سی سی ٹی وی لگانے کی تجویز بورڈ کے ٹرسٹیز کے سامنے رکھی جائے گی اور اس بات کوبھی یقینی بنایا جائے گا کہ سی سی ٹی وی لگانے سے کسی تاریخی عمارت کے ڈھانچے کو نقصان نہ پہنچے ۔ واضح رہے کہ اس آشرم کی خاص بات اس کے ٹھیک درمیان میں واقع گاندھی جی کی اصل رہائش گاہ ’ہردے کنج‘ہے جہاں سے مذکورہ نقل کی چوری ہوئی ہے ۔ اس آشرم کو 1915 میں یہاں کوچرب میں قائم کیا گیا تھا مگر دو سال بعد1917 میں اسے رانپ کے قریب موجودہ مقام پر منتقل کر دیا گیا تھا۔

Leave a Reply

TOPPOPULARRECENT