Saturday , October 21 2017
Home / شہر کی خبریں / گاندھی کے قاتل گوڈسے کی ساورکر نے ذہن سازی کی تھی

گاندھی کے قاتل گوڈسے کی ساورکر نے ذہن سازی کی تھی

ساورکر کو بھارت رتن ناممکن ، تشار گاندھی کا مذاکرہ سے خطاب
حیدرآباد۔8 جون (سیاست نیوز ) ساورکر کو بھارت رتن سے نوازنے کیلئے یہ ضروری ہے کہ ساورکر کے گناہوں پر پہلے پردہ ڈالا جائے۔ گاندھی پر چوتھی گولی چلائے جانے کا شوشہ چھوڑتے ہوئے اسی طرح کی ایک کوشش کی گئی تھی لیکن عدالت نے اس منصوبہ کو ناکام بنادیا۔ تشار گاندھی نے گزشتہ دنوں حیدرآباد میں منعقدہ ایک مذاکرے کے دوران کئے گئے سوال کا جواب دیتے ہوئے یہ بات کہی ۔ انہوں نے بتایا کہ گاندھی پر گولی چلانے والے گوڈسے کی ذہن سازی ساورکر نے ہی کی تھی اور یہ رپورٹ موجود ہے جب تک یہ رپورٹ رہے گی اس وقت تک ساورکر کو بھارت رتن دیا جانا ممکن نہیں ہے اسی لئے یہ کوششیں کی جارہی ہیں کہ ساورکر کا نام گاندھی کے قاتلوں کی فہرست سے حذف کیا جاسکے۔ تشار گاندھی نے بتایا کہ گاندھی جی کو 3گولیاں لگیں تھیں اور ان 3گولیوں کی مکمل تفصیلات موجود ہیں لیکن اس کے باجود چوتھی گولی کی منطق گڑھی جا رہی ہے۔ جبکہ تمام حقائق کپور کمیشن کی رپورٹ میں موجود ہیں۔ انہوں نے بتایا کہ ملک میں برسر اقتدار طبقہ دستور ہند میں تبدیلی کر سکتا ہے اسی لئے سیکولر طبقات کو چوکنا رہنے کی ضرورت ہے۔ تشار گاندھی نے بتایا کہ ملک میں کرپشن سے پاک نظام کے قیام کیلئے عوام اپنا کردار ادا کریں تاکہ رشوت کے چلن کو روکا جاسکے۔ انہوں نے ملک کے موجودہ حالات پر گہری تشویش کا اظہار کرتے ہوئے کہا کہ اب یہ ملک گاندھی کا ملک نہیں رہا بلکہ اس ملک میں فرقہ واریت کے ذریعہ منافرت پھیلائی جارہی ہے تاکہ زعفرانی طاقتوں کے منصوبوں کو عملی جامہ پہنایا جائے۔ انہوں نے کہا کہ فرقہ پرستی تیزی سے بڑھتی جارہی ہے ممبئی جیسے شہروں میں اب بھی مسلمانوں کو مکان دینے سے انکار کیا جا رہا ہے۔ تشار گاندھی نے کہا کہ ملک کی بنیادوں کو مستحکم کرنے کیلئے یہ ضروری ہے کہ عوام سیاسی سازشوں کا شکار ہونے کے بجائے ان کے نظریات کے خلاف آواز بلند کرتے ہوئے اتحاد و اتفاق کا مظاہرہ کرتے ہوئے ملک کی سالمیت کو برقرار رکھنے میں اپنا کلیدی کردار ادا کریں۔ پناش کے زیر اہتمام منعقدہ نالج گیٹ پروگرام کے ایک سیشن میں ذرائع ابلاغ کے نمائندوں سے کی گئی بات چیت کے دوران ان خیالات کا اظہار کرتے ہوئے مسٹر تشار گاندھی نے بتایا کہ ملک میں اگر بی جے پی کو راجیہ سبھا میں اقتدار حاصل ہو جاتا ہے تو اسے دستور میں ترمیم سے کوئی نہیں روک سکتا۔اس پروگرام میں محترمہ تیستا سیتلواد ‘ جناب اسلم خان اور دیگر موجود تھے۔

TOPPOPULARRECENT