Friday , August 18 2017
Home / سیاسیات / گجرات بی جے پی صدر کی نامزدگی پرالجھن

گجرات بی جے پی صدر کی نامزدگی پرالجھن

آئندہ سال اسمبلی انتخابات کے پیش نظر سخت آزمائش
احمدآباد۔25جنوری ( سیاست ڈاٹ کام ) قیادت کے بحران سے دوچار بی جے پی گجرات یونٹ ایسے وقت نئے صدر کے انتخاب کیلئے مشکلات میںگھر گئی ہے جبکہ سال 2001ء کے بعد سے پٹیل کوٹہ ایجیٹیشن ( تحریک تحفظات ) اور مجالس مقامی کے انتخابات میںشکست کے پیش نظر سخت آزمائش سے گذر رہی ہے اگرچیکہ ریاستی یونٹ نے 15جنوری تلسنکرات کے بعد گجرات کے نئے صدر کے انتخاب کا اعلان کیا تھا لیکن اس عہدہ کیلئے موزوں لیڈر کی نشاندہی اور قطعیت دینے سے قاصر دکھائی دے رہی ہے  جبکہ آئندہ سال گجرات اسمبلی کے انتخابات منعقد ہورہے ہیں ۔ موجودہ ریاستی صدر آر سی فلڈو کی میعاد ایک عرصہ قبل ہی ختم ہوچکیہے ۔ ایک سینئر پارٹی لیڈر نے بتایا کہ مرکزی قیادت نے کسی بھی امیدوار کے نام کو قطعیت نہیں دی ہے جس کے باعث ریاست صدر کی نامزدگی میں تاخیر ہورہی ہے ۔ واضخ رہے کہ پارٹی کو 2001ء میں اس طرح کے بحران کا سامنا تھا ۔ انہوں نے بتایا کہ پارٹی کی یہ الجھن ہیکہ بی جے پی ریاستی صدر کی حیثیت سے کسی پٹیل کو یا کسی او بی سی کا تقرر کیا جائے کیونکہ پارٹی نے پٹیل برادری کیلئے تحفظات فراہم کرنے سے یکر انکار کردیاہے  جبکہ چیف منسٹر آنندی بین پٹیل کا تعلق بھی پٹیل برادری سے ہے اور پارٹی صدارت کے ایک اور پٹیل کی نامزدگی دانشمندی نہیں ہوگی تاہم پٹیل کوٹہ ایجی ٹیشن کے پیش نظر پٹیل کی نامزدگی کارگر ثابت ہوسکتی ہے ۔ پارٹی ترجمان ٹی کے جڈیجہ نے خیال ظاہر کیا کہ گجرات کی سیاست سے وزیراعظم نریندر مودی کے درکنار ہوجانے کے بعد پٹیل کوٹہ ایجی ٹیشن اور مجالس مقامی کے انتخابات میں شکت کے نتیجہ میں بی جے پی ایک آزمائشی دور سے گذر رہی ہے جبکہ آئندہ سال اسمبلی انتخابات کی آمد آمد ہے ۔

TOPPOPULARRECENT