Tuesday , August 22 2017
Home / ہندوستان / گجرات میں پٹیل برادری کے بند کا بہت کم اثرسورت میں ایک نوجوان کی کوٹہ کیلئے خودکشی

گجرات میں پٹیل برادری کے بند کا بہت کم اثرسورت میں ایک نوجوان کی کوٹہ کیلئے خودکشی

احمدآباد/ سورت ۔18اپریل ( سیاست ڈاٹ کام) پٹیل برادری نے گجرات میں کوٹہ کے مسئلہ پر ریاست گیر بند کی اپیل کی تھی لیکن آج اس اپیل کا بہت کم اثر دیکھا گیا ۔ سوائے چند علاقوں کے جہاں اس برادری کی غالب آبادی ہے ریاست کے مختلف شہروں میں کوئی بند نہیں منایا گیا ۔ کل قصبہ مہسانا میں جو کرفیو نافذ کیا گیا تھا آج صبح برخواست کردیا گیا ‘ جب کہ سردار پٹیل گروپ نے کل قصبہ مہسانا میں بند کی اپیل کی تھی ‘جہاں بڑے پیمانے پر تشدد ہوا تھا لیکن آج یہ علاقہ پُرسکون رہا ۔ سورت سے موصولہ اطلاع کے بموجب پٹیل برادری کے ایک 28سالہ نوجوان نے جو کوٹہ احتجاج میں پیش پیش تھا آج خودکشی کرلی ۔ مبینہ طور پر اُس نے زہر پی لیا تھا کیونکہ اسے یہ جان کر کہ پولیس نے پٹیل برادری کے کوٹہ قائدین کے خلاف مہسانا میں کارروائی کی ہے اُسے شدید صدمہ پہنچا تھا ۔ پتی دارآندولن سمیتی کے قائدین نے دعویٰ کیا کہ 27سالہ بھاون کنڈ کو قائدین کے خلاف پولیس کارروائی کی اطلاع سے شدیدصدمہ پہنچا تھا ۔ وہ کوٹہ احتجاج میں شامل تھا اور انامت سمیتی سے تعلق رکھتا تھا ۔ اُس نے زہریلا مادہ استعمال کرتے ہوئے اپنی رہائش گاہ پونا دام میں خودکشی کرلی ۔ یہ واقعہ کل شام پیش آیا ۔ اس اطلاع پرکہ پولیس اور پٹیل برادری کے احتجاجیوں کے درمیان مہسانا میں جھڑپ ہوگئی ہے سخت صدمہ پہنچا تھا ۔ پٹیل برادری نے مہسانا سے جیل بھرو احتجاج کا آغاز کیا تھا ۔ کنڈ کو فوری ایک خانگی ہاسپٹل منتقل کیا گیا جہاں آدھی رات کے وقت وہ جانبر نہ ہوسکا ۔

TOPPOPULARRECENT