Wednesday , August 23 2017
Home / شہر کی خبریں / گرفتار شدہ ٹی ٹی ڈی بورڈ ممبر شیکھر ریڈی چیف منسٹر اے پی کے بے نامی شخص

گرفتار شدہ ٹی ٹی ڈی بورڈ ممبر شیکھر ریڈی چیف منسٹر اے پی کے بے نامی شخص

چینائی میں چندرا بابو کے کئی بہی خواہ ، صرف شیکھر ریڈی نشانہ : این رگھوویرا ریڈی
حیدرآباد ۔ 14 ۔ دسمبر : ( سیاست نیوز ) : آندھرا پردیش کانگریس کمیٹی صدر مسٹر این رگھو ویرا ریڈی نے الزام عائد کیا کہ غیر محسوب دولت و املاک معاملہ میں گرفتار کیے جانے والے ٹی ٹی ڈی بورڈ ممبر شیکھر ریڈی درحقیقت چیف منسٹر آندھرا پردیش مسٹر این چندرا بابو نائیڈو کے ’ بے نامی ‘ شخص ہیں ۔ آندھرا رتنا بھون میں اخباری نمائندوں سے بات چیت کرتے ہوئے کہا کہ چینائی میں مسٹر چندرا بابو نائیڈو کے کئی بہی خواہ افراد موجود ہیں اس کے باوجود انہیں نظر انداز کر کے محض شیکھر ریڈی چیف منسٹر مسٹر چندرا بابو نائیڈو کے بے نامی شخص ہونے کی وجہ سے ہی انہیں ( شیکھر ریڈی کو ) ٹی ٹی ڈی بورڈ رکن کے عہدے پر فائز کیا ۔ پرانے کرنسی نوٹوں کا تذکرہ کرتے ہوئے صدر کانگریس پارٹی ریاست آندھرا پردیش نے کہا کہ بڑے کرنسی نوٹوں کے منسوخ کیے جانے کے باعث عوام کو نوٹوں کے درپیش مسائل و مشکلات کے خلاف احتجاج کے طور پر ’ استفسار کریں گے آئیے ‘ کے نام سے کانگریس پارٹی کے زیر اہتمام جاریہ ماہ 23 دسمبر کو ’ چلو ویلگاپوڈی ‘ پروگرام منظم کیا جائے گا ۔ اس پروگرام میں پارٹی قائدین و کارکن کثیر تعداد میں شریک ہوں گے ۔ انہوں نے کہا کہ عارضی سکریٹریٹ کے قریب اس احتجاجی پروگرام کو منعقد کیا جائے گا ۔ مسٹر رگھوویرا ریڈی نے اس پروگرام کو کامیاب بنانے کے لیے تمام سیاسی جماعتوں سے بھر پور تعاون کرنے کی پر زور اپیل کی ۔ مسٹر رگھوویرا ریڈی نے بی جے پی حکومت کو اپنی سخت تنقید کا نشانہ بناتے ہوئے کہا کہ عام شہریوں کے ہاں رقومات نہ رہنے کی وجہ سے ایکطرف ان کے گھروں میں شادیوں کی تقاریب ملتوی کردی جارہی ہیں ۔ وہیں دوسری طرف بی جے پی قائدین کے گھروں میں شادیوں پر سینکڑوں کروڑ روپئے خرچ کئے جارہے ہیں ۔ انہوں نے رقومات کے مسئلہ پر عوام کو درپیش مشکلات و مصائب پر اپنی شدید برہمی کا اظہار کرتے ہوئے کہا کہ رقومات کے لیے عوام سڑکوں پر قطاروں میں کھڑے رہنے پر مجبور ہیں ۔ صدر کانگریس کمیٹی ریاست آندھرا پردیش نے چیف منسٹر مسٹر این چندرا بابو نائیڈو کے بعض ادعا جات کا مضحکہ اڑاتے ہوئے کہا کہ ایک ہزار اور پانچ سو روپیوں کے کرنسی نوٹوں کی منسوخی صرف اور صرف میرے ایک مکتوب پر ہونے کا ادعا کرنے والے مسٹر چندرا بابو نائیڈو سے دریافت کیا کہ آیا نئے جاری کردہ دو ہزار روپئے کے کرنسی نوٹوں کو فوری طور پر منسوخ کرنے کی خواہش کرتے ہوئے مرکزی حکومت کو مکتوب کیوں تحریر نہیں کیا ۔ فوری واضح کرنے کا مسٹر چندرا بابو نائیڈو سے مطالبہ کیا ۔۔

TOPPOPULARRECENT