Thursday , August 24 2017
Home / ہندوستان / گودھرا واقعہ کا ایک اور ملزم 14 برسوں بعد گرفتار

گودھرا واقعہ کا ایک اور ملزم 14 برسوں بعد گرفتار

احمد آباد، 13 جولائی (سیاست ڈاٹ کام) گجرات کے گودھرا میں 2002 میں سابرمتی ایکسپریس کے ایک ڈبے میں آگ لگائے جانے کے واقعہ کے بعد تقریباً 14 برسوں سے فرار اس معاملے کے ایک اہم ملزم کو احمد آباد پولیس کی کرائم برانچ نے ہمسایہ مہاراشٹر کے مالیگاؤں سے گرفتار کرلیا ہے جو گزشتہ تقریباً ایک سال میں ایسی پانچویں گرفتاری ہے ۔27 فروری 2012 کو وسطی گجرات کے گودھرا ریلوے اسٹیشن کے نزدیک مذکورہ ٹرین کے کوچ ایس 6 میں آگ لگائے جانے کے سبب اس میں سوار 59 لوگوں کی موت ہوگئی تھی جس میں کئی ایودھیا سے لوٹ رہے کارسیوک بھی تھے ۔ اس واقعہ کے بعد پورے گجرات میں فساد پھیل گیا تھا جس میں سینکڑوں افراد ہلاک ہوئے تھے ۔پولیس نے بتایا کہ گودھرا معاملے کے اہم ملزم عمران بٹوک عرف شیرو کو مالیگاؤں سے پکڑا گیا ہے اور آج صبح اسے یہاں لایا گیا۔ وہ وہاں ریت کے غیر قانونی دھندہ کرتا تھا۔واضح رہے کہ گودھرا معاملے کی جانچ کرنے والی خصوصی جانچ ٹیم (ایس آئی ٹی) نے اس معاملے میں کُل 94 لوگوں کے خلاف فرد جرم داخل کیا تھا۔ حالانکہ خصوصی عدالت نے سال 2011 میں ان میں سے صرف 31 کو قصوروار قرار دیا تھا جن میں سے 11 کو پھانسی اور باقی کو عمرقید کی سزا سنائی گئی تھی۔ اس سزا کے خلاف ان میں سے کئی کی اپیل ہائی کورٹ میں زیرسماعت ہے ۔

TOPPOPULARRECENT