Monday , August 21 2017
Home / کھیل کی خبریں / گیند سے چھیڑ چھاڑ کے الزام پر ڈی ویلرس برہم

گیند سے چھیڑ چھاڑ کے الزام پر ڈی ویلرس برہم

ساؤتھمپٹن۔ 28 مئی (سیاست ڈاٹ کام) جنوبی افریقہ کے کپتان نے ڈی ویلرس نے اصرار کے ساتھ کہا کہ ان کی ٹیم نے کوئی غلطی نہیں کی ہے۔ واضح رہے کہ ان کی ٹیم کو جو انگلینڈ کے خلاف ونڈے سیریز ہار چکی ہے، اب گیند سے چھیڑ چھاڑ کے ایک نئے تنازعہ کا سامنا ہے۔ میزبان انگلینڈ نے ساؤتھمپٹن میں دوسرا ونڈے انٹرنیشنل میچ دو دن سے جیت کر مہمانوں کے خلاف صفر کے مقابلے 2 سے ناقابل تسخیر سبقت حاصل کرلی جبکہ یہ سمجھا جارہا تھا کہ پیر کو لارڈس میں کھیلے جانے والے تیسرے اور آخری میچ سے قبل جنوبی افریقہ کی ٹیم دوسرا میچ جیت کر 1-1 کے ساتھ انگلینڈ کے برابر ہوجائے گی۔ مہمانوں کے لئے شکست کا صدمہ ہی کم نہیں تھا کہ اب ان پر گیند سے چھیڑ چھاڑ کا الزام بھی عائد کردیا گیا ہے۔ 33 ویں اوور کے بعد ایسا محسوس ہورہا تھا کہ وہ (اے بی ڈی ویلرس) گیند تبدیل کرنے کی کوشش کررہے ہیں لیکن ڈی ویلرس نے انکشاف کیا کہ دراصل وہ امپائروں گیفائنی اور راب سائیلی سے یہ اصرار کررہے تھے کہ جنوبی افریقی کھلاڑی غیرقانونی طور پر گیند کی حالت تبدیل کرنے کے ذمہ دار نہیں ہیں۔ واضح رہے کہ گزشتہ سال نومبر میں بھی جنوبی افریقہ ٹسٹ کرکٹ ٹیم کے کپتان فاف ڈی پلیسیس پر گیند سے چھیڑ چھاڑ کیلئے ایک میچ کی فیس کے مساوی جرمانہ عائد کیا گیا تھا جب انہوں نے پودینہ کا پیپرمنٹ کھانے کے بعد اپنے تھوک سے گیند کو چمکایا تھا۔ میچ کے بعد منعقدہ پریس کانفرنس میں یہ پوچھے جانے پر کہ آیا آپ یہ محسوس کررہے ہیں کہ اس کے لئے آپ کو ذمہ دار ٹھہرایا جارہا ہے، ڈیلرس نے جواب دیا کہ ’’جی ہاں! میں ایسا محسوس کررہا ہوں‘‘۔ انہوں نے مزید کہا کہ ’’امپائرس محسوس کرتے ہیں کہ گیند کی حالت بدلی گئی۔ وہ بھی ایک ایسے انداز میں جس کے باعث مجھے یہ محسوس کرنا پڑرہا ہے کہ پوری ٹیم کے طور پر ہم سب اس کے لئے ذمہ دار ہیں‘‘۔ ڈی ویلرس نے مزید کہا کہ ’’اس اقدام سے مجھے سخت افسوس ہوا ہے لیکن ایسا کرنے کے بعد خاموشی اختیار کرلی گئی اور تاحال کچھ نہیں ہوا ہے اور کوئی جرمانے عائد نہیں کئے گئے ہیں‘‘۔

TOPPOPULARRECENT