Wednesday , September 20 2017
Home / شہر کی خبریں / ہائی اسکول تک مادری زبان میں تعلیم کی وکالت

ہائی اسکول تک مادری زبان میں تعلیم کی وکالت

قومی سطح پر آگے بڑھنے ہندی سیکھنا ضروری ، انگلش کی نہیں انگریزی ذہنیت کی مخالفت

حیدرآباد۔ 22 مئی (سیاست نیوز) مرکزی وزیر شہری ترقی و پارلیمانی اُمور ایم وینکیا نائیڈو نے کہا کہ حکومت ، ہائی اسکول کی سطح تک مادری زبان میں ذریعہ تعلیم کے حق میں ہے اور ہندی کو فروغ دینے کی ضرورت ہے کیونکہ وہ قومی زبان ہے۔ ایک مخصوص کلاس تک ذریعہ تعلیم مادری زبان میں ہونا چاہئے۔ ملک کو اس تعلق سے اتفاق رائے پیدا کرنا چاہئے۔ تمام ریاستی حکومتوں کو چاہئے کہ اس تعلق سے اتفاق رائے پیدا کریں کہ ہائی اسکول تک تعلیم مادری زبان میں ہو، سرکاری کام کاج میں ہندی کے استعمال کا جائزہ لیتے ہوئے مرکزی وزیر نے سرکاری کام کاج میں ہندی کے فروغ کی ضرورت کو اجاگر کیا۔ انہوں نے کہا کہ ہر ریاستی حکومت کو چاہئے کہ وہ مادری زبان کی حوصلہ افزائی کرے۔ مقامی نوکریاں ایسے امیدواروں کو دی جائیں جو مادری زبان میں تعلیم حاصل کئے ہوں۔ وینکیا نائیڈو نے کہا کہ اسی طرح مادری زبان کی حوصلہ افزائی ہوگی۔ زبان کا تعلق ثقافت سے ہوتا ہے۔ زبان کا تحفظ تہذیب و ثقافت کا تحفظ ہے۔ قومی سطح پر ہندی کو سرکاری زبان کا موقف حاصل ہے۔ اس وجہ سے اس کو فروغ دیا جانا چاہئے۔ انگریزی سیکھنے پڑھنے پر کوئی اعتراض نہیں ہے، لیکن ذہنیت انگریزی نہیں ہونا چاہئے۔ انہوں نے کہا کہ تشویش کی بات یہ ہے کہ مادری زبان فراموش کی جارہی ہے۔ نئی نسل انگلش کی طرف لپک رہی ہے۔ ہم انگریزی کے خلاف نہیں ہیں، لیکن بچوں کو ہندی سیکھنا چاہئے۔ اس کے بغیر وہ قومی سطح پر آگے نہیں بڑھ سکیں گے۔ ہندی سیکھنا ضروری ہے۔ انگریزی پڑھتے ہوئے مادری زبان پر بھی عبور حاصل کرنا چاہئے لیکن حکومت، سہ لسانی فارمولہ پر عمل کررہی ہے۔ حکومت پابند عہد ہے، کسی زبان کو کسی پر مسلط کرنے کا سوال ہی نہیں ہے۔ ہم چاہتے ہیں کہ قومی اور آبائی زبانیں فروغ پائیں اور ان کا تحفظ اور حوصلہ افزائی ہو۔

TOPPOPULARRECENT