Saturday , June 24 2017
Home / کھیل کی خبریں / ہاشم آملہ اور اکشر پٹیل کی طوفانی بیٹنگ، گجرات کیخلاف پنجاب کی جیت

ہاشم آملہ اور اکشر پٹیل کی طوفانی بیٹنگ، گجرات کیخلاف پنجاب کی جیت

میزبان ٹیم دونوں محاذوں پر کمزور ، مک کلم اور فنچ جلد آؤٹ ہوگئے۔ رائنا اور کارتک کی کوششیں رائیگاں

راجکوٹ۔ 23 اپریل (سیاست ڈاٹ کام) آئی پی ایل کے آج یہاں کھیلے گئے ایک میچ میں کنگس الیون پنجاب نے ہاشم آملہ اور اکشر پٹیل کی طوفانی بیٹنگ کے سبب میزبان گجرات لائینس کو 26 رنز سے شکست دے دی۔ میزبان گجرات کی ٹیم اپنے ٹاپ آرڈر بیٹسمین کے جلد آؤٹ ہوجانے کے سبب بھی شکست سے دوچار ہوئی ہے۔ قبل ازیں گجرات لائینس کے کپتان سریش رائنا نے ٹاس جیت کر مہمان ٹیم کو پہلے بیٹنگ کیلئے مدعو کیا تھا۔ جنوبی آفریقہ کے افسانوی بیٹسمین ہاشم آملہ نے دلچسپ انداز میں طوفانی بیٹنگ کرتے ہوئے کنگس الیون پنجاب کی کامیابی کیلئے ایک مستحکم بنیاد رکھا اور اکشر پٹیل نے ان کا خوب ساتھ نبھایا۔ اس طرح ان کی ٹیم 20 اوورس میں 188 رنز کے مسابقتی اسکور پر پہونچ گئی تھی۔ اس کامیابی کے ساتھ پنجاب کی ٹیم اب پوائنٹس کے ٹیبل پر چوتھے مقام پر پہونچ گئی ہے اور گجرات سب سے نیچے ہے۔ ہاشم آملہ نے 40 گیندوں کا سامنا کرتے ہوئے 2 چھکوں اور 9 چوکوں کی مدد سے 65 رنز بناتے ہوئے اپنی ٹیم کیلئے ایک مستحکم بنیاد رکھی اور اکشر پٹیل نے ان کا ساتھ نبھاتے ہوئے 17 گیندوں میں 34 رنز بنایا۔ شان مارش (24 گیندوں میں 30 رنز) اور گلین میکسویل (18 گیندوں میں 31 رنز) نے بھی اپنی ٹیم کے اسکور میں قیمتی اضافہ کیا۔ اس کھیل کی خاص بات یہ رہی کہ ہاشم آملہ نے آج کا کھیل بالکل وہیں سے شروع کیا جو انہوں نے گزشتہ روز ممبئی انڈینس کے خلاف کھیلے گئے میچ میں چھوڑا تھا۔ گجرات کے کپتان رائنا نے جیسے ہی لیگ اسپنر شیدا اگروال کو بولنگ دی، آملہ نے لگاتار دو شاندار چوکے لگاتے ہوئے ان کے حملوں کو پسپا کردیا۔ جنوبی آفریقہ کے افسانوی بیٹسمین آملہ نے اینڈریو ٹائی کی بولنگ پر طوفانی بیٹنگ کرتے ہوئے دو چوکے اور ایک چھکے لگایا۔ انہوں نے مارش کی رفاقت میں 70 اور کپتان میکسویل کی رفاقت میں 47 رنز کا اضافہ کیا۔ گجرات لائینس کے لئے ٹائی 2/35 اور جڈیجہ 1/32 کے ساتھ بہتر بولنگ کی لیکن باسل تھپمی کوئی وکٹ حاصل کئے بغیر 44 رنز دے بیٹھے۔ گجرات کے برنڈن مک کلم پہلے ہی اوورس میں آؤٹ ہوگئے۔ آرون فنچ بھی زیادہ نہیں کھیل سکے اور چھٹویں اوورس میں آؤٹ ہوگئے، لیکن رائنا (32) اور دنیش کارتک (58) نے اپنی ٹیم کو بچانے کی ممکنہ جدوجہد جاری رکھی جس کے جواب میں پنجاب کے بولرس نے جارحانہ تیور اپناتے ہوئے ایک کے بعد ایک جلد وکٹس حاصل کئے۔

Leave a Reply

TOPPOPULARRECENT