Thursday , August 17 2017
Home / اضلاع کی خبریں / ہریتاہرم پروگرام بدعنوانیوں سے پاک

ہریتاہرم پروگرام بدعنوانیوں سے پاک

بودھن۔12فبروری( سیاست ڈسٹرکٹ نیوز) صدرنشین بلدیہ بودھن مسٹر ایلیا نے اپنے دفتر میںطلب کردہ پریس کانفرنس میں بتایا کہ سرکاری پروگرام  ہریتاہرم پروگرام کے دوران کسی طرح کی بدعنوانی نہیںہوئی ‘ چیرمین نے کانگریس پارٹی پر الزام عائد کیا کہ کانگریس پارٹی اپنے وجود کو بودھن شہر میں ظاہر کرنے برسراقتدار ٹی آر ایس پارٹی پر غیر ضروری الزامات عائد کررہی ہے ۔ چیرمین نے تفصیلات بتاتے ہوئے کہا کہ ہریتا ہرم پروگرام کیلئے مختص کردہ سات لاکھ روپیوں میں سے تین لاکھ بارہ ہزار روپئے شہر کے مختلف مقامات پر پودے لگانے اور تعلیمی اداروں کو اس رسم سے خریدے گئے پودے سربراہ کئے گئے ۔ انہوں نے بتایا کہ شہر میں اسپیشل ڈریو اور بتکماں تہوار وغیرہ کو اس طرح جملہ سات لاکھ 79ہزار روپئے خرچ کئے گئے  جس کے تمام ریکارڈس دفتر میں موجود ہیں۔ انہوں نے کانگریس پارٹی کے قائدین پر انہیں ہراساں کرنے کا الزام عائد کیا ۔ اس پریس کانفرنس میں کمشنر بلدیہ بودھن مسٹر دیویندر بھی موجود تھے ۔ واضح ہو کہ گذشتہ ماہ تقریباً تمام سیاسی جماعتوں کے ارکان بلدیہ بشمول ٹی آر ایس پارٹی کے ارکان نے ضلع کلکٹر نظام اباد سے ملاقات کرتے ہوئے بودھن شہر میں ہوئے ہریتاہرم پروگرام کیدوران فرضی بلس تیار کرتے ہوئے سرکاری رقم کا بیجا استعمال ہونے کی تحریری طور پر شکایت شواہد کے ساتھ ضلع کلکٹر کو پیش کیا تھا‘ ضلع کلکٹر نے آر ڈی او بودھن مسٹر شیام پرساد لال کو ہریتا ہرم کے ریکارڈس کی بعد تنقیح رپورٹس پیش کرنے کی ہدایت دی تھی ۔ مسٹر شیام پرساد لال گذشتہ ہفتہ کمشنر بلدیہ اور متعلقہ عہدیداروں کو دفتر آر ڈی او بودھن طلب کر کے ریکارڈس کی تنقیح کی تھی اور ان کے بیانات قلم بند کئے ۔ آر ڈی او بودھن کی رپورٹس کا افشاں ہونے سے قبل چیرمین بلدیہ کی طرف سے عجلت میں پریس کانفرنس طلب کرتے ہوئے اپنیصفائی پیش کرنے پر ہریتاہہرم پروگرام پر شک و شبہات پائے جاتے ہیں ۔

TOPPOPULARRECENT