Thursday , October 19 2017
Home / اضلاع کی خبریں / ہریتا ہارم پروگرام کو نقصان پہنچانے والے کو ایوارڈ

ہریتا ہارم پروگرام کو نقصان پہنچانے والے کو ایوارڈ

کریم نگر ضلعی صدر ٹی ڈی پی وجئے رمنا راؤ کی شدید تنقید

کریم نگر۔/17اگسٹ، ( سیاست ڈسٹرکٹ نیوز) شجر کاری پروگرام کے بعد ہریتا ہارم پروگرام کی بے عزتی کرنے اور پودوں کو نقصان پہنچانے والے پیداپلی کے رکن اسمبلی داسری منوہر ریڈی کو حوالے کردہ ہریتا مترا ایوارڈ واپس لے لئے جانے کا ضلعی صدر تلگودیشم پارٹی سی ایچ وجئے رمنا راؤ نے مطالبہ کیا۔ اس سلسلہ میں انہوں نے ڈی آر او کو ایک یادداشت بھی پیش کی۔ 2015 میں چیف منسٹر کے سی آر نے پیدا پلی کے آئی ٹی آئی کالج کے احاطہ میں شجرکاری کی تھی۔ تقریباً چار ہزار پودے لگائے گئے۔پنچایت چیرمین نے 2.5 لاکھ پودے بھی فراہم کئے تھے۔ ہریتا ہارم پروگرام کے تحت گھر گھر پھلوں کے پودوں کیلئے ایک کروڑ روپئے اپنی طرف سے دینے کا تیقن دیا تھا۔ وجئے راما راؤ نے الزام لگایا کہ اس سلسلہ میں اینٹ کی بھٹی کے مالکین، رائس ملز کے مالکین اور کنٹراکٹرس سے زبردستی پیسے وصول کئے گئے۔ آئی ٹی آئی کے احاطہ میں ٹرینٹی کالج کے طلباء کے ذریعہ وہاں کے پودے اکھاڑ دیئے گئے اور میدان کو مسطح بنادیا گیا جس میں چیف منسٹر کے ہاتھوں لگائے گئے پودے بھی شامل تھے۔ ایسے شخص کو ہریتا ہارم ایوارڈ عطا کیا گیا تعجب کی بات ہے۔ انہوں نے مطالبہ کیا کہ پیداپلی کے رکن اسمبلی کے خلاف کارروائی کی جائے۔ اس موقع پر کلپا ڈبو آگیا، روڈا سرینواس، پٹہ نریندر، دامرہ ستیم، انوسوریہ نائک، سدانندم، گنویادو، ابیا گوڑ، سدھاکر ریڈی، سمپت کملاکر، ٹی رمیش، گاجے رمیش اور ایشور وغیرہ موجود تھے۔

TOPPOPULARRECENT