Friday , August 18 2017
Home / Top Stories / ہلاری اور ٹرمپ کے قطعی مقابلہ کی راہ ہموار

ہلاری اور ٹرمپ کے قطعی مقابلہ کی راہ ہموار

اوباما اورلینڈو کے قاتل پر اتنے برہم نہیں جتنے مجھ پر ہیں : ٹرمپ
واشنگٹن۔ 15 جون (سیاست ڈاٹ کام) ڈیموکریٹک صدارتی امیدوار ہلاری کلنٹن نے آج اپنی پرائمریز کا اختتام جیت کے ساتھ کیا جہاں انہوں نے اپنی ہی پارٹی کے حریف سنیٹر برنی سینڈرس کو شکست دی اور اس طرح اب جاریہ سال نومبر میں ری پبلیکن صدارتی امیدوار ڈونالڈ ٹرمپ کے ساتھ ان کے کانٹے کے مقابلہ کی راہ ہموار ہوگئی ہے اور 68 سالہ کلنٹن، ڈونالڈ ٹرمپ ایک دوسرے کے آمنے سامنے ہوں گے۔ حسن اتفاق سے ٹرمپ کی آج 70 ویں سالگرہ ہے۔ دوسری طرف ہلاری جو قبل ازیں وزیر خارجہ کے جلیل القدر عہدہ پر فائز رہ چکی ہیں اور نیویارک کی سابق سینیٹر بھی ہیں۔ امریکہ کی ایک اہم ترین سیاسی پارٹی کی جانب سے صدارتی امیدوار کی دوڑ میں پہلی خاتون بن کر بھی ابھری ہیں۔ اس موقع پر ہلاری نے ٹوئٹ کرتے ہوئے اپنی جیت کے لئے تمام ووٹرس کا شکریہ ادا کیا۔ حیرت انگیز طور پر شکست خوردہ برنی سینڈرس ہنوز دستبردار ہونے تیار نہیں۔ ہلاری نے کہا کہ ٹرمپ نے جو کچھ کہا ہے کہ وہ انتہائی شرمناک بات ہے۔ پٹس برگ میں اپنے حامیوں سے خطاب کرتے ہوئے ہلاری نے کہا کہ اورلینڈو میں جو کچھ ہوا، اس کیلئے ہمیشہ دکھ رہے گا اور ہماری تمام تر ہمدردیاں مہلوکین کے ارکان خاندان کیلئے ہیں لیکن ٹرمپ کے بیان نے ایک بار پھر ظاہر کردیا ہے کہ وہ صبر و تحمل سے عاری شخص ہیں اور کمانڈر انچیف کے لئے صبر و تحمل کا حامل ہونا انتہائی ضروری ہوتا ہے جبکہ ٹرمپ میں ایسی کوئی صلاحیتیں نہیں ہیں۔کہیں ایسا نہ ہو کہ آگے چل کر ری پبلیکن پارٹی کو اپنے صدارتی امیدوار کے انتخاب پر پچھتانا پڑے۔ خیر! میں یہ جانتی ہوں کہ ٹرمپ نے اوباما کے خلاف ان کی پیدائش کو لے کر جو مہم چلائی تھی، اس میں انہوں نے الزام عائد کیا تھا کہ اوباما امریکہ میں پیدا نہیں ہوئے۔ میں یہ یاد دہانی کروانا چاہتی ہوں کہ کیا ہوائی امریکہ کا حصہ نہیں؟ اوباما نے ٹرمپ کو مسلمانوں کا مخالف تو کہہ دیا لیکن اس کا جواب دینے کے لئے ٹرمپ نے بھی کسی کوتاہی کا مظاہرہ نہیں کیا اور کہا کہ صدر اوباما کو ری پبلیکن امیدوار ٹرمپ پر اورلینڈو کے حملہ آور سے زیادہ غصہ ہے۔ جنوبی کیرولینا میں اپنے حامیوں سے خطاب کرتے ہوئے ٹرمپ نے کہا کہ اورلینڈو قتل عام پر سارا ملک رنج و غم میں ڈوب چکا ہے لیکن اوباما نے قتل عام کرنے والے قاتل پر اتنی برہمی کا اظہار نہیں کیا ہے جتنا مجھ (ٹرمپ پر) کیا ہے جبکہ ہونا اس کے برعکس چاہئے تھا۔ امریکہ کو اس وقت انتہا پسند اسلامی دہشت گردی کا سامنا ہے جس کی سرکوبی کرنا وقت کی اہم ضرورت ہے۔

TOPPOPULARRECENT