Saturday , September 23 2017
Home / Top Stories / ’ہمارے ساتھ احترام سے پیش آئیں‘ ،امریکہ کو پاکستان کا جواب

’ہمارے ساتھ احترام سے پیش آئیں‘ ،امریکہ کو پاکستان کا جواب

امریکی سفیر سے جنرل باجوہ کی بات چیت ، دہشت گردی کیخلاف تعاون کے اعتراف پر زور

اسلام آباد۔23 اگست (سیاست ڈاٹ کام) پاکستان کی فوج کے سربراہ جنرل قمر جاوید باجوہ نے آج یہاں امریکہ کے سفیر سے کہا کہ امریکہ سے پاکستان کو فوجی یا مالی مدد نہیں مانگ رہا ہے بلکہ چاہتا ہے کہ واشنگٹن اس پر بھروسہ کرے اور احترام سے پیش آئے۔ اس سے ایک دن قبل ٹرمپ نے اسلام آباد سے کہا تھا کہ وہ اپنی سرزمین پر دہشت گردوں کو محفوظ ٹھکانے فراہم کرنا بند کرے۔ امریکہ کے سفیر ڈیوڈ ہیل نے راولپنڈی کے فوجی ہیڈکوارٹرس پر جنرل باجوہ سے ملاقات کی اور انہیں صدر ٹرمپ کی نئی جنوب ایشیائی پالیسی سے واقف کروایا جس میں انہوں (ٹرمپ) نے کہا تھا کہ دہشت گردوں کیلئے پاکستان میں محفوظ ٹھکانوں پر ہم مزید خاموش نہیں رہ سکتے‘‘۔ اس کے جواب میں جنرل باجوہ نے کہا کہ ’’امریکہ سے ہم کوئی فوجی یا مالی مدد نہیں مانگ رہے ہیں لیکن اپنا تعاون اور مساعی کا اعتراف، بھروسہ اور سوجھ بوجھ و تال میل چاہتے ہیں۔ پاکستانی فوج کے میڈیا شعبہ انٹر سرویسیس پبلک ریلیشنس کی طرف سے جاری ایک بیان کے مطابق پاکستانی فوج کے سربراہ نے پاکستان کیلئے افغانستان میں امن کی اہمیت کا تذکرہ کرتے ہوئے اس ضمن میں ان کے ملک کی طرف سے کی جانے والی کوششوں کا حوالہ دیا۔ باجوہ نے کہا کہ پاکستان کے اس مساعی کا مقصد کسی کی خوشنودی حاصل کرنا نہیں ہے بلکہ پاکستان کے قومی مفاد اور پالیسی کے مطابق ہے۔ امریکہ سفیر ڈیوڈ ہیل نے کہا کہ امریکہ ، دہشت گردی کے خلاف جنگ میں پاکستان کے رول کی قدر کرتا ہے اور مسئلہ افعانستان کی یکسوئی میں اس سے تعاون کی خواہش بھی کرتا ہے۔

TOPPOPULARRECENT