Saturday , August 19 2017
Home / دنیا / ہندوستانی معیشت ، اندھوں کی نگری میں کانا بادشاہ جیسی : راجن

ہندوستانی معیشت ، اندھوں کی نگری میں کانا بادشاہ جیسی : راجن

واشنگٹن ۔ 16 اپریل ۔(سیاست ڈاٹ کام) ایک ایسے وقت جب ہندوستان کو عالمی معیشت میں ایک تابناک مقام قرار دیا جارہا ہے کہ اس دوران ریزرو بینک آف انڈیا کی نظر میں ہندوستانی معیشت دراصل ’’اندھوں کی نگر میں کانے بادشاہ‘‘ جیسی ہے ۔ عالمی معیشت میں سست روی کی صورتحال کے درمیان بشمول آئی ایم ایف کئی اداروں نے ہندوستانی معیشت کو ایک چمکدار ستارہ قرار دیا ہے جبکہ رگھو رام راجن کی قیادت میں ریزرو بینک آف انڈیا کو بھی ان کے ملک کے مالیاتی نظام کو بیرونی ابتر حالات سے محفوظ رکھنے کیلئے موثر اقدامات کرنے کا کریڈٹ بھی دیا جارہا ہے ۔ راجن جو بین الاقوامی مالیاتی ادارہ ( آئی ایم ایف) کے سابق اعلیٰ ترین ماہر معاشیات بھی ہیں ’’عالمی معیشت کے اُفق پر ہندوستان کو ایک درخشاں ستارہ ‘‘ قرار دیئے جانے سے متعلق منطق کے بارے میں ایک سوال پر جواب دیا کہ ’’میر خیال میں ہمیں ہنوز وہ مقام حاصل کرنے کی ضرورت ہے جہاں ہم خود کو مطمئن کرسکتے ہیں۔ فی الحال ہماری معیشت کی حالت وہ نہیں ہے جو ہم چاہتے ہیں ہمارے پاس ایک مشہور کہاوت یہ ہے کہ ’اندھوں کی نگری میں کانا بادشاہ ہوتا ہے ‘ فی الحال ہم اس مقام پر پہونچے ہیں

اور ہمیں اپنا مطلوبہ مقام حاصل کرنے کیلئے ہنوز بہت کچھ کرنا باقی ہے ‘‘ رگھورام راجن نے جو شکاگو یونیورسٹی کے بوتھ اسکول آف بزنس میں فینانس کے مہمان پروفیسر بھی ہیں عالمی بینک اور آئی ایم ایف کے علاوہ جی۔ 20 کے وزراء فینانس اور ریزرو بینکس کے سربراہان کے اجلاسوں میں شرکت کیلئے یہاں پہونچے ہیں ۔ انھوں نے مزید کہا کہ ’’ہم یہ محسوس کرتے ہیں کہ حالات اس نکتہ پر مثبت موڑ اختیار کررہے ہیں جنھیں ہم اپنے لئے سازگار تصور کرتے ہیں ۔ سرمایہ کاری میں زبردست اضافہ ہورہا ہے ۔ ہمارے پاس صنعت و کاروبار کی سطح پر وسیع تر استحکام ہے ۔ بلاشبہ ہم عالمی معیشت میں پیدا ہونے والے ہر بحران کے اثر سے بالاتر تو نہیں ہوسکتے لیکن کئی بحرانوں سے یقینا خود کو محفوظ رکھ سکے ہیں‘‘ ۔ رگھو رام راجن ہندوستانی اور عالمی معیشت پر بلاتذبذب دو ٹوک انداز میں اظہارخیال کیلئے شہرت رکھتے ہیں کہا کہ ہندوستان میں کئی سازگار تبدیلیاں رونما ہوئی ہیں لیکن ہنوز چند کام باقی ہیں۔

TOPPOPULARRECENT