Friday , August 18 2017
Home / کھیل کی خبریں / ہندوستانی ٹیم کا ویراٹ کوہلی پر مکمل انحصار نہیں: دھونی

ہندوستانی ٹیم کا ویراٹ کوہلی پر مکمل انحصار نہیں: دھونی

کل وشاکھاپٹنم میں سیریز جیتنے کیلئے قومی کپتان پُرعزم
رانچی ۔27 اکٹوبر (سیاست ڈاٹ کام) اپنے شہر اور مقامی شائقین کے روبرو نیوزی لینڈ کے خلاف دوسرے ونڈے میں شکست کے باوجود ہندوستانی محدود اوورس کی ٹیم کے کپتان مہندر سنگھ دھونی 29 اکٹوبر کو وشاکھاپٹنم میں کھیلے جانے والے سیریز کے فیصلہ کن مقابلہ میں کامیابی کے ساتھ سیریز اپنے نام کرنے کے لئے پُرعزم ہیں۔ دھونی نے اعتراف کیاکہ اِن کے لئے ’فنیشر‘ کا کردار ادا کرنا سب سے مشکل کام ہے اور خاص کر چوتھے ونڈے میں جس طرح کی وکٹ دستیاب تھی، اُس پر تیزی کے ساتھ رنز بنانا مشکل تھا۔ ہندوستانی ٹیم جوکہ 261 رنز کا تعاقب کررہی تھی اور اجنکیا راہانے اور ویراٹ کوہلی نے ٹیم کے اسکور کو 2/128 تک پہنچاتے ہوئے کام آسان کردیا تھا لیکن کوہلی کے آؤٹ ہونے کے بعد میزبان ٹیم کے نشانے کا تعاقب مشکل ہوگیا۔ اِس خیال کو مسترد کرتے ہوئے دھونی نے کہاکہ ہندوستانی ٹیم ویراٹ کوہلی پر مکمل انحصار نہیں کررہی ہے جیسا کہ اعداد و شمار بتاتے ہیں۔ کوہلی ٹیم کے اہم کھلاڑی ضرور ہیں لیکن اِن پر مکمل انحصار نہیں کیا جارہا ہے۔ حالیہ عرصہ میں ہندوستانی ٹیم کو زیادہ ونڈے کھیلنے کا موقع نہیں ملا جس کی وجہ سے کھلاڑیوں کو ردھم میں آنے وقت لگ رہا ہے۔ قبل ازیں گزشتہ رات نیوزی لینڈ نے ہندوستان کو سیریز کے چوتھے میچ میں 19 رنز سے شکست دے کر سیریز 2-2 سے برابر کردی ہے۔ ہندوستانی کپتان مہندر سنگھ دھونی کے شہر رانچی میں کھیلے گئے سیریز کے چوتھے میچ میں نیوزی لینڈ نے ٹاس جیت کر پہلے  بیٹنگ کا فیصلہ ‘ اوراوپنرز کے 96 رنز کے عمدہ آغازکی بدولت 260 رنز بنائے ۔ناقص فام کا شکار مارٹن گپٹل نے 78 رنز کی اننگز کھیل کر فارم میں واپسی کی ۔نیوزی لینڈ کی بڑے اسکور کی امیدوں کو اصل دھکا اس وقت لگا جب 217 کے اسکور پر روس ٹیلر بھی 35 رنز بنانے کے بعد آؤٹ ہو کر پویلین لوٹ گئے۔ہندوستانی بولروں نے اختتامی 15 اوورز میں کفایتی بولنگ کرتے ہوئے حریف بیٹسمینوں کو کھل کر کھیلنے کا موقع فراہم نہیں کیا

 

اور مقررہ اوورز میں مہمان ٹیم سات وکٹ کے نقصان پر 260 رنز بنا سکی۔ہندوستان نے نشانہ کا تعاقب شروع کیا تو 19 کے اسکور پر اسے روہت شرما کی صورت میں پہلا نقصان اٹھانا پڑا تاہم گزشتہ میچ میں بہترین کھلاڑی کا اعزاز حاصل کرنے والے ویراٹ کوہلی نے ایک مرتبہ پھر عمدہ بیٹنگ کرتے ہوئے اجنکیا راہانے کے ساتھ دوسری وکٹ میں 79 رنز جوڑے۔کوہلی نیوزی لینڈ کے لئے ایک مرتبہ پھر خطرہ بنتے جا رہے تھے لیکن ایش سودھی نے 45  رنز بنانے والے کوہلی کی اننگز ختم کر کے ہندوستان کو بڑا نقصان پہنچایا۔اجنکیا راہانے نے اپنی نصف سنچری مکمل کی لیکن راہانے اور کپتان مہندرا سنگھ دھونی کے یکے بعد دیگرے آؤٹ ہونے کے بعد ہندوستانی ٹیم سنبھل نہ سکی اور وقفے وقفے سے وکٹیں گنواتی رہی۔اکشر پٹیل نے38 اور دھول کلکرنی نے آؤٹ ہوئے بغیر 25 رنز بنا کر کچھ مزاحمت کی لیکن ان کی یہ کاوش ہندوستان کو میچ جتوانے کے لئے ناکافی ثابت ہوئی۔ہندوستان کی پوری ٹیم 49ویں اوور میں 241 رنز بنا کر آؤٹ ہو گئی اور نیوزی لینڈ نے میچ میں 19 رنز سے فتح حاصل کر کے سیریز بھی 2-2 سے برابر کردی۔مارٹن گپٹل کو 72 رنز کی اننگز کھیلنے پر میچ کا بہترین کھلاڑی قرار دیا گیا۔دونوں ٹیموں کے درمیان پانچ میچوں کی سیریز کا آخری اور فیصلہ کن میچ 29 اکتوبر کو وشاکا پٹنم میں کھیلا جائے گا۔

TOPPOPULARRECENT