Wednesday , August 23 2017
Home / ہندوستان / ہندوستانی کمپنیوں کو افریقہ میں سرمایہ کاری کی ترغیب

ہندوستانی کمپنیوں کو افریقہ میں سرمایہ کاری کی ترغیب

بھرپور وسائل اور مواقع، ہر دو کے لئے فائدے کا سودا: سشما سوراج
نئی دہلی۔28 اکٹوبر (سیاست ڈاٹ کام)ہندوستانی کمپنیوں کو افریقی ممالک میں سرمایہ کرنی چاہئے جہاں وسائل کے ساتھ ساتھ ترقی کے بھرپور مواقع ہیں اور یہ ہر دو کے لئے فائدہ مند ہے۔ وزیر خارجہ سشما سوراج نے آج یہ بات کہی۔ انہوں نے دورہ کنندہ افریقی ممالک کے وزرائے خارجہ سے ملاقات کے بعد اپنے تجربات کا ذکر کیا اور کہا کہ اس خطہ میں ہندوستان کے لئے تجارت اور سرمایہ کاری کے بھرپور مواقع ہیں۔ انہوں نے کہا کہ افریقہ میں معاشی ترقی کی جو صورتحال پائی جاتی ہے وہ کہیں اور نہیں۔ جس دن سرمایہ کاری اور یہاں موجود مواقع دونوں یکجا ہوں گے تو پھر یہ سب کے لئے فائدہ مند سودا رہے گا۔ انہوں نے کہا کہ افریقہ کی ضروریات پوری ہوں گی اور سرمایہ کار منافع حاصل کرسکیں گے۔ سشما سوراج ہند۔افریقہ بزنس فورم سے خطاب کررہی تھیں۔ انہوں نے کہا کہ ہندوستان اور افریقہ کے مابین تجارت میں ایک دہے کے دوران 10 گنا اضافہ ہوا ہے اور سال 2014-15ء میں یہ 2.3 بلین تک پہنچ گئی ہے۔

انہوں نے کہا کہ افریقہ ایک بڑی مارکٹ ہے جہاں ہمہ اقسام کی اشیاء اور خدمات فراہم کی جاسکتی ہیں۔ انہوں نے کہا کہ آج ہندوستان دنیا بھر میں تیزی سے ترقی پارہی معیشت ہے جبکہ افریقہ تیزی سے ترقی پارہا خطہ ہے۔ ہندوستانی کمپنیوں نے تقریباً 32.35 بلین ڈالرس کی افریقہ میں سرمایہ کاری کی ہے۔ ہندوستانی سرمایہ کار یہاں موجود فوائد اور مواقع سے بھرپور واقفیت رکھتے ہیں۔ انہوں نے توقع ظاہر کی کہ افریقہ کے مختلف ممالک ایسے اقدامات کریں گے جن سے ہندوستان سرمایہ کاری کے لئے راغب ہوسکے۔ بالخصوص مینوفیکچرنگ اور پراسیسنگ سرگرمیوں میں ہندوستان اپنا رول ادا کرسکتا ہے۔ سشما سوراج نے ہندوستانی اور افریقی تاجرین سے کہا ہے کہ وہ ’’میک ان انڈیا‘‘ کا بھرپور فائدہ اٹھائیں اور باہمی طور پر مشترکہ بزنس وینچرس شروع کریں تاکہ ہردو کو فائدہ ہوسکے۔ سشما سوراج نے کہا کہ تمام تر قدرتی وسائل، محنت کش عوام اور اچھی قیادت کے باوجود افریقہ محض چند پالیسیوں کی بناء ترقی کے معاملہ میں پیچھے رہ گیا۔

TOPPOPULARRECENT