Wednesday , September 20 2017
Home / دنیا / ہندوستانی ۔ امریکیوں سے ڈونالڈ ٹرمپ کا اظہار تشکر

ہندوستانی ۔ امریکیوں سے ڈونالڈ ٹرمپ کا اظہار تشکر

واشنگٹن 17 ڈسمبر ( پی ٹی آئی ) امریکہ کے منتخب صدر ڈونالڈ ٹرمپ نے اپنی انتخابی کامیابی میں ہندوستانی امریکیوں کے رول کا اعتراف کیا ہے اور کہا کہ ان کی مہم ہندووں میں زیادہ موثر رہی ہے ۔ ٹرمپ نے اورلانڈو فلوریڈا میں ایک اظہار تشکر کی ریلی سے خطاب کرتے ہوئے کہا کہ آج اس ریلی میں کئی افراد ہندوستانی برادری سے اور ہندووں سے ہیں۔ ہم ہندووں کے ساتھ بہتر تال میل رکھتے ہیں۔ اسی ریاست میں ڈونالڈ ٹرمپ کامیاب قرار پائے تھے ۔ فلوریڈا میں قابل لحاظ تعداد میں ہندوستانی امریکی اور ہندو عوام رہتے ہیں۔ اس میں ہندوستانی برادری کے کافی افراد نے شرکت کی ۔ یہ پہلا موقع ہے کہ ڈونالڈ ٹرمپ نے اپنی تاریخی انتخابی کامیابی میں ہندوستانی امریکیوں اور ہندووں کے رول کا اعتراف کیا ہے ۔ ٹرمپ نے ریلی میں موجود ہندوستانی برادری کے ارکان کی سمت اشارہ کرتے ہوئے کہا کہ ’ وہ کہاں ہیں ؟ یہ ایک بڑا گروپ ہے ۔ یہ لوگ یہاں موجود ہیں۔ وہ ان افراد کا شکریہ ادا کرنا چاہتے ہیں۔ وہ بہت بہترین تھے ۔ ان افراد نے رائے دہی میں حصہ لیا اور بہت شاندار رہے ۔ ٹرمپ نے امریکہ میں صدارتی انتخاب کی پولنگ سے پندرہ دن قبل ایک خیراتی تقریب میں حصہ لیا تھا جو ریپبلیکن ہندو اتحاد نے منعقد کی تھی جس کا مقصد کشمیر اور بنگلہ دیش میں دہشت گردی کے ہندو متاثرین کی مدد کیلئے فنڈز جمع کرنا تھا ۔ یہ پہلا موقع ہے کہ کسی صدارتی امیدوار نے ایک ہندوستانی ۔ امریکی تقریب میں شرکت کی تھی ۔ اس تقریب سے خطاب کرتے ہوئے ٹرمپ نے عہد کیا کہ وہ ہند ۔ امریکہ تعلقات کو مزید بہتر بنانے کیلئے کام کرینگے اور وہ وائیٹ ہاوز میں ہندوستان کے بہترین دوست رہیں گے ۔ انہوں نے وزیر اعظم مودی کی بھی ستائش کی اور کہا کہ وہ معاشی اصلاحات نافذ کر رہے ہیں اور افسر شاہی کی رکاوٹوں کو دور کرنے اقدامات کر رہے ہیں۔ ٹرمپ کے خطاب کے بعد ان کے افراد خاندان نے فلوریڈا اور ورجینیا دونوں مقامات پر مندروں کا دورہ کیا تھا ۔ کسی صدارتی مہم میں یہ بھی پہلا تجربہ تھا ۔ ٹرمپ کی مہم میں ایک اشتہار بھی جاری کیا گیا تھا جس میں انہیں یہ کہتے ہوئے دکھایا گیا تھا ’’ اب کی بار ۔ ٹرمپ سرکار ‘‘ ۔ یہ نعرہ در اصل نریندر مودی کی 2014 انتخابی مہم کا حصہ تھا ۔
ریپبلیکن ۔ ہندو اتحاد کے صدر نشین ایس ایس کمار کا کہنا تھا کہ ٹرمپ کے اسی اشتہار کی وجہ سے ہندوستانی امریکیوں کی رائے دہی کے انداز میں تبدیلی آئی تھی بصورت دیگر یہ برادری روایتی طور پر ڈیموکریٹک پارٹی کی تائید کرتی رہی تھی ۔

TOPPOPULARRECENT