Friday , September 22 2017
Home / کھیل کی خبریں / ہندوستان اور پاکستان کے مابین حالات سازگار نہیں

ہندوستان اور پاکستان کے مابین حالات سازگار نہیں

کرکٹ روابط کے احیاء کیلئے خوشگوار ماحول کی اہمیت، سکریٹری بی سی سی آئی انوراگ ٹھاکر
نئی دہلی۔25 اکٹوبر (سیاست ڈاٹ کام) بی سی سی آئی سکریٹری انوراگ ٹھاکر نے آج کہا ہے کہ ہندوستان اور پاکستان کے مابین حالات کرکٹ کے لئے فی الحال سازگار نہیں ہیں اور انہوں نے مجوزہ باہمی سیریز کے احیاء سے قبل خوشگوار ماحول تیار کرنے کی اہمیت پر زور دیا۔ آج یہاں ارکان پارلیمنٹ اور فلمی شخصیتوں کے مابین کرکٹ میچ کے موقع پر ذرائع ابلاغ کے نمائندوں سے بات چیت کرتے ہوئے انہوں نے کہا کہ دونوں ممالک کے مابین کرکٹ کے لئے فی الحال حالات سازگار نہیں ہیں۔ حکومت پاکستان کو پہلے ہندوستانی حکومت سے بات چیت کرنی چاہئے۔ اس سے ایک سازگار اور مثبت ماحول تیار ہونے میں کافی مدد ملے گی۔ اس کے بعد دونوں کرکٹ بورڈس کو بات چیت اور کرکٹ روابط کے احیاء کے لئے زیادہ کوشش کی ضرورت لاحق نہیں ہوگی۔ پاکستان کرکٹ بورڈ کے صدرنشین شہریار خان گزشتہ ہفتے ہندوستان آئے تھے تاکہ ڈسمبر میں ہند۔پاک مجوزہ باہمی سیریز کے سلسلہ میں تبادلہ خیال کیا جائے۔ لیکن شیوسینا کارکنوں نے ممبئی میں بی سی سی آئی ہیڈ کوارٹر میں گھس کر گڑبڑ کی جس کی وجہ سے مقررہ بات چیت کو ملتوی کرنا پڑا۔

گزشتہ جمعہ کو پاکستان کرکٹ بورڈ نے بی سی سی آئی سے سے ربط قائم کیا اور مجوزہ سیریز کا مقام تبدیل کرتے ہوئے اسے یو اے ای میں منعقد کرنے کی تجویز پیش کی۔ اس دوران ہندوستان اور جنوبی افریقہ کے مابین وانکھڑے اسٹیڈیم میں کھیلے جارہے آخری اور فیصلہ کن میچ کے لئے انہوں نے ہندوستانی ٹیم سے نیک توقعات کا اظہار کیا۔ انہوں نے کہا کہ یہ سیریز کافی دلچسپ ثابت ہوئی ہے اور جو کوئی آخری میچ جیتے گا فیصلہ اسی کے حق میں ہوگا۔ وہ وزیراعظم نریندر مودی سے بھی شکریہ ادا کرنا چاہتے ہیں جنہوں نے ’’من کی بات‘‘ میں اس سیریز کی اہمیت کا ذکر کیا ہے۔ ٹھاکر نے کہا کہ وہ ہندوستانی ٹیم کے لئے نیک توقعات کا اظہار کرتے ہیں۔ انوراگ ٹھاکر نے آج ارکان پارلیمنٹ اور معروف شخصیتوں کے مابین کھیلے گئے اس میچ میں ناٹ آئوٹ سنچری بنائی۔ انہوں نے کھیلنے کا موقع فراہم کرنے پر منتظمین سے شکریہ ادا کیا۔ اس میچ کی ساری آمدنی وزیراعظم ریلیف فنڈ میں دی جائے گی تاکہ نیپال میں آئے زلزلے اور ہندوستان میں گرمی کی لہر سے متاثر ہونے والوں کی مدد کی جاسکے۔

TOPPOPULARRECENT