Tuesday , September 19 2017
Home / ہندوستان / ہندوستان میں چینی پٹاخوں کی درآمد پر پابندی

ہندوستان میں چینی پٹاخوں کی درآمد پر پابندی

پی ایم کے لیڈر کی نمائندگی پر مرکزی وزیر کامرس کی وضاحت
چینائی 12 ستمبر (سیاست ڈاٹ کام) مرکز نے آج وضاحت کی ہے کہ چینی پٹاخوں کی درآمدات کیلئے کوئی منظوری نہیں دی گئی ہے اور ریاستی حکومتوں سے کہا گیا ہے کہ پڑوسی ملک سے اس طرح کی اشیاء کی غیر قانونی منتقلی کے خلاف سخت کارروائی کی جائے۔ وزیر صنعت و کامرس نرملا سیتا رامن نے بتایا کہ ہندوستان میں چینی ساختہ پٹاخوں کی درآمد کیلئے تاجروں کو اجازت نہیں دی گئی ہے اگر کوئی یہ منگواتا ہے تو غیر قانونی ہوگا۔ اُنھوں نے کہاکہ تمام چیف منسٹرس یہ گذارش کی گئی ہے کہ چینی پٹاخوں کی اسمگلنگ کرنے والوں کے خلاف سخت کارروائی کی جائے۔ قبل ازیں پی ایم کے لیڈر انبومنی رام داس نے مرکزی وزیر سیتارامن سے یہ درخواست کی تھی۔ چینی پٹاخوں کی درآمد اور فروخت پر پابندی عائد کردی جائے جوکہ ٹاملناڈو میں پٹاخہ ساز صنعت سے وابستہ 90 لاکھ افراد کی جز معاش کو شدید متاثر کررہی ہے۔ اُنھوں نے مرکزی وزیر کو موسومہ ایک مکتوب میں یہ الزام عائد کیاکہ گزشتہ 6 سال کے دوران چینی پٹاخوں کے 600 سے زائد کنٹینرس کھلونے ظاہر کرتے ہوئے درآمد کئے گئے ہیں جس کی وجہ سے انڈین فائر ورک انڈسٹری کو 6,000 کروڑ کے نقصان کا خطرہ لاحق ہوگیا۔ واضح رہے کہ ہندوستان میں ٹاملناڈو کا شہر شیوا کاشی، پٹاخہ سازی کا مرکز تصور کیا جاتا ہے۔

TOPPOPULARRECENT