Thursday , August 17 2017
Home / کھیل کی خبریں / ہندوستان میں کامیابی زندگی کا بہترین وقت ہوگا

ہندوستان میں کامیابی زندگی کا بہترین وقت ہوگا

میزبان کھلاڑیوں کیخلاف لفظی جنگ ساتھیوں کا اپنا فیصلہ ،آسٹریلیائی کپتان اسمتھ کی پریس کانفرنس

ممبئی ۔14 فبروری۔(سیاست ڈاٹ کام) ہندوستان کے خلاف اُسی کی سرزمین پر رواں ماہ کھیلی جانے والی ٹسٹ سیریز میں کامیابی کے ضمن میں اظہارخیال کرتے ہوئے مہمان ٹیم کے کپتان ڈیون اسمتھ نے کہاکہ ہم جانتے ہیں کہ ہندوستان کے خلاف کامیابی ایک سخت ترین چیلنج ہے لیکن اگر ہم یہاں کامیابی حاصل کرپاتے ہیں تو یہ ہماری زندگی کا بہترین وقت ہوگا اور اُمید ہے کہ آئندہ دس تا بیس برسوں کے دوران یہ ہمارے لئے زندگی کا بہترین وقت ہوگا ۔ ہندوستان پہونچنے کے بعد پہلی پریس کانفرنس کے دوران مہمان ٹیم کے کپتان نے کہاکہ ہندوستان میں کھیلنا ایک بڑا چیلنج ہوتا ہے اور ہم جانتے ہیں کہ یہاں کامیابی حاصل کرپائیں تو یہ ہماری زندگی کا بہترین کارنامہ ہوگا ۔ آسٹریلیا کو آخری مرتبہ 2004-05 ء سیریز میں 2-1 کی کامیابی حاصل ہوئی تھی ، جس کے بعد سے اسے یہاں ہندوستان میں ایک مرتبہ بھی کامیابی حاصل نہیں ہوپائی ہے اور اب ٹیم چار مقابلوں کی سیریز کھیلنے ہندوستان پہنچ چکی ہے ۔ آسٹریلیائی ٹیم ہندوستان کے خلاف چار مقابلوں کی سیریز سے قبل سہ روزہ وارم اپ مقابلہ انڈیا ۔اے ٹیم کے خلاف کھیلے گی ۔ 27 سالہ کپتان جوکہ ہندوستانی وکٹوں کے برتاؤ سے اچھی طرح واقف ہیں کیونکہ وہ گزشتہ چند برسوں سے یہاں آئی پی ایل کھیل رہے ہیں ، اسمتھ نے کہاکہ ہمارے لئے یہ سخت ترین دورہ ہے اور آئندہ چھ ہفتوں کے دوران ہم بہتر کرکٹ کھیلنے کیلئے پرعزم ہیں۔ ہندوستانی ٹیم 2012 ء میں انگلینڈ کے خلاف ہوئی شکست کے بعد سے اپنے گھریلو میدانوں پر ناقابل تسخیر رہنے کے علاوہ اس نے گزشتہ چھ سیریزوں میں آسٹریلیا ، جنوبی افریقہ، نیوزی لینڈ اور انگلینڈ کے خلاف بھی فتوحات حاصل کی ہیں۔ علاوہ ازیں ٹیم کے کوچ ڈیرن لیہمن جو خود بھی ہندوستان کے حالات اور وکٹوں سے اس لئے بھی واقف ہیں کیونکہ انھوں نے آئی پی ایل میں چند ایک ٹیموں کی کوچنگ بھی کی ہے ، نے کہا ہے کہ دورۂ ہند کیلئے ان کی ٹیم کی تیاریاں بہتر ہوئی ہیں اور تمام کھلاڑی خاص کر فاسٹ بولروں کے ساتھ اسپنرس بھی بہتر مظاہرہ کیلئے پرعزم ہیں۔ کوچ نے مزید کہا کہ ہندوستانی ٹیم گزشتہ 20مقابلوں سے ناقابل تسخیر رہتے ہوئے خود کو ایک طاقتور ٹیم بنایا ہے اور ان کے خلاف کھیلنا ایک بڑا چیلنج ہے ۔ آسٹریلیائی ٹیم نے دورۂ ہند کی تیاریوں کیلئے دوبئی میں وقت گذارا ہے جس کے بعد وہ کل ممبئی پہونچی ہے ۔ دوبئی میں ٹیم کی تیاریوں کے ضمن میں اسمتھ نے کہاکہ ہندوستان کی وکٹوں کے حالات ایسے ہی ہوتے ہیں جیسے کہ دوبئی کے حالات ہیں لہذا ہم وہاں تھوڑا وقت گذارکر ہندوستان کے حالات سے خود کو ہم آہنگ کرنے کی کوشش کی ہے ۔ مقابلے کے دوران کھلاڑیوں کے درمیان لفظی تکرار اور بحث کے حوالے سے آسٹریلیائی کپتان نے کہاکہ یہ اب ساتھی کھلاڑیوں پر منحصر ہے کہ اگر وہ سمجھتے ہیں کہ ہندوستانی کھلاڑیوں کے خلاف لفظی جنگ سے ٹیم کو فائدہ ہوتا ہے تو پھر ہم اُنھیں ایسا کرنے کی اجازت دیں گے ۔

TOPPOPULARRECENT