Wednesday , August 23 2017
Home / Top Stories / ہندوستان میں ہر روز سڑک حادثات میں اوسطاً 400 افراد ہلاک

ہندوستان میں ہر روز سڑک حادثات میں اوسطاً 400 افراد ہلاک

ڈرائیوروں کی لاپرواہی اور سڑکوں کی ناقص تعمیر اصل وجہ، مرکزی وزیر ٹرانسپورٹ کا بیان
نئی دہلی۔/9جون، ( سیاست ڈاٹ کام ) مرکزی وزیر ٹرانسپورٹ مسٹر نیتن گڈکری نے آج بتایا کہ انجینئرنگ میں نقائص کی وجہ سے ہندوستان میں ہر روز سڑک حادثات میں اوسطاً400 افراد ہلاک ہورہے ہیں اور یہ اعتراف کیا کہ گذشتہ2سال کے دوران مخلصانہ کام اور سنجیدہ کوششوں کے باوجود کوئی خاص تبدیلی واقع نہیں ہوسکی۔ ہندوستان میں سڑک حادثہ سال برایء 2015 کی رپورٹ جاری کرتے ہوئے مرکزی وزیر نے کہا کہ انہیں یہ جان کر شدید تکلیف ہوتی ہے کہ ہر گھنٹہ 57 حادثات میں 17اموات واقع ہورہی ہیں، اور 54فیصد مہلوکین میں 15تا 34 سال عمر گروپ کے ہیں۔ انہوں نے بتایا کہ گوکہ عوام ہمیں تنقید کا نشانہ بنائیں گے لیکن میں نے یہ رپورٹ منظر عام پر لانے کا ارادہ کرلیا ہے۔ ستم ظریفی یہ ہے کہ گذشتہ دو سال کے دوران جذبہ وقف سے کام اور سنجیدہ کوششوں کے خاطر خواہ نتائج بھی برآمد نہیں ہوئے ہیں

اگرچیکہ ہم مایوس نہیں ہیں لیکن صورتحال کو تبدیل کرنے کے عہد پر کاربند ہیں اور ہم سڑک حادثات میں اس قدر انسانی جانوں کے اتلاف پر خاموش نہیں رہ سکتے ہیں کیونکہ یہ صورتحال دلی تکلیف اور ذہنی صدمہ کا باعث بن گئی ہے۔ رپورٹ کی اجرائی کے موقع پر میڈیا سے بات چیت کرتے ہوئے مسٹر نیتن گڈکری نے سرک حادثات میں ہلاکتوں پر تشویش کا اظہار کرتے ہوئے کہا کہ اس طرح اموات جنگوں، وبائی امراض اور عسکریت پسندی میں بھی نہیں ہوتی۔ انہوں نے بتایا کہ انسانی جانوں کے اتلاف کی ہرگز اجازت نہیں دی جاسکتی اور گذشتہ 2سال میں حادثات کی روک تھام کیلئے متواتر اقدامات کئے جارہے ہیں جبکہ پردھان منتری سڑک یوجنا پر عمل آوری اور روڈ سیفٹی کیلئے پراجکٹ پر ایک فیصد سیس وصول کیا جارہا ہے تاکہ 5000کروڑ روپئے اکٹھا کئے جاسکیں۔ مرکزی وزیر نے کہا کہ رپورٹ میں یہ نشاندہی کی گئی ہے کہ سال 2015 میں 77فیصد سڑک حادثات کیلئے ڈرائیوروں کی لاپرواہی ذمہ دار ہے اور دوسری اہم وجہ سڑک تعمیرات کی انجینئرنگ میں نقائص ہیں۔ انہوں نے پیشرو حکومت کو مورد الزام ٹھہراتے ہوئے کہا کہ یو پی اے حکومت نے تعمیری مصارف ( لاگت ) میں کٹوتی کردی ہے جس کے نتیجہ میں اہم سڑکوں سے مربوط اوور بریجس اور انڈر پاسیس کی تعمیر پایہ تکمیل کو نہیں پہنچ سکی اور متعدد مقامات بشمول دہلی۔ گرگاؤں شاہراہ پر آئے دن سڑک حادثات پیش آرہے ہیں۔انہوں نے یہ ایقان ظاہر کیا کہ حکومت کی منصوبہ بندی کے باعث آئندہ ایک سال کے دوران سڑک حادثات میں 50فیصد تک کمی واقع ہوجائیگی جس کے مطابق یومیہ 10ہزاریں چلنے والی سڑکوں کو 4 لائین میں تبدیل کردیا جائیگا۔

TOPPOPULARRECENT