Saturday , August 19 2017
Home / ہندوستان / ہندوستان پڑوسی ممالک میں استحکام دیکھنے کا خواہاں: پرنب مکھرجی

ہندوستان پڑوسی ممالک میں استحکام دیکھنے کا خواہاں: پرنب مکھرجی

نئی دہلی، 14 نومبر (یو این آئی) اقتصادی خوشحالی کے لئے امن و استقرار کی اہمیت پر زور دیتے ہوئے صدر جمہوریہ پرنب مکھرجی نے آج کہا کہ ہندوستان ہر حال میں پڑوسی ممالک میں استحکام اور ترقی چاہتا ہے ۔  مسٹر پرنب مکھرجی نے یہاں بین الاقوامی تجارتی میلے کے 36 ویں ایڈیشن کا باقاعدہ افتتاح کرتے ہوئے کہا کہ اقتصادی خوشحالی کے لئے امن اور استحکام ضروری ہے ۔ ہندوستان کا خیال ہے کہ پڑوسی ممالک میں استحکام برقرار رہے اور وہاں کے لوگوں کی پیہم اقتصادی ترقی ہو۔ انہوں نے ملکی معیشت میں اقتصادی اصلاحات کا ذکر کرتے ہوئے کہا کہ اشیاء و خدمات ٹیکس نظام سے ریاستوں اور مرکز کے زیر انتظام علاقوں میں باہمی مسابقہ کی ترقی ہوگی۔ اس سے سرمایہ کاری کو اپنی طرف متوجہ کرنے میں مدد ملے گی اور روزگار کے نئے مواقع پیدا ہوں گے ۔ قابل تجدید توانائی پر زور دینے کے لئے حکومت کی تعریف کرتے ہوئے صدر جمہوریہ نے کہا کہ اس سے صاف ماحول پیدا کرنے میں مدد ملے گی اور مسلسل ترقی کی راہ ہموار ہوگی۔ اس موقع پر مرکزی وزیر تجارت و صنعت نرملا سیتا رمن، سینئر آفیسر اور بہت سے ممالک کے سفارتکار بھی موجود تھے ۔تجارتی میلہ 28 نومبر تک چلے گا جس میں 19 نومبر تک کا وقت کاروباریوں کے لئے رکھا گیا ہے ۔ اس کے بعد اسے عام لوگوں کے لئے کھول دیا جائے گا۔ اس سال میلے کا بنیادی موضوع ‘ڈیجیٹل انڈیا’ ہے ۔ میلے میں ‘میک ان انڈیا’ پروگرام اور تجارت اور صنعت کو سماجی اقتصادی ترقی کے ایک انجن کے طور پر ظاہر کرتا ہے ۔ میلے میں سوچھ بھارت مہم، نمامی گنگے ، جن دھن یوجنا، اسکل انڈیا، انفراسٹرکچر، 175 سولر مشن، کسان فصل بیمہ ، اور شہری تبادلوں کے لئے اٹل مشن (امرت)، اسٹارٹ اپ اور اسٹینڈ اپ مہم، اسمارٹ سٹی، ماڈل گرام وغیرہ کی نمائش کی گئی ہے ۔اس سال تجارتی میلے میں جنوبی کوریا ‘شریک ملک’ ہے جبکہ ‘مرکوز ملک’ بیلاروس کوبنایا گیا ہے ۔ ‘شریک ریاست’ مدھیہ پردیش اور جھارکھنڈ ہیں اور ہریانہ ‘ مرکوزریاست’ کے طور پر حصہ لے رہا ہے ۔ میلے میں 27 ممالک کی 150 سے زائد کمپنیاں حصہ لے رہی ہیں۔ ان میں آسٹریلیا، افغانستان، بیلارس، بحرین، بنگلہ دیش، چین، بھوٹان، جرمنی، ہانگ کانگ، ایران، کویت، کرغزستان، میانمار، ہالینڈ، یمن، سری لنکا، جنوبی افریقہ، جنوبی کوریا، سنگاپور، تبت، ترکی، تھائی لینڈ، متحدہ عرب امارات اور برطانیہ شامل ہیں۔ تجارتی میلے میں اس سال ملک اور بیرون ملک کی سات ہزار کمپنیاں شرکت کررہی ہیں۔تمام ریاستی اور مرکز کے زیر انتظام علاقوں، مرکزی حکومت کی وزارتیں اور محکمے ، پبلک سیکٹرکے ادارے ،کارپوریٹ اور غیر سرکاری تنظیم وغیرہ بھی میلے میں شرکت کر رہے ہیں۔

TOPPOPULARRECENT