Saturday , March 25 2017
Home / Top Stories / ہندوستان کو 126 رنز کی سبقت کے بعد آسٹریلیا کے لیے مشکلات کا آغاز

ہندوستان کو 126 رنز کی سبقت کے بعد آسٹریلیا کے لیے مشکلات کا آغاز

بنگلور ۔6 مارچ (سیاست ڈاٹ کام) چتیشور پجارا (ناٹ آؤٹ 79) اور اجنکیا رہانے (ناٹ آؤٹ 40) کے درمیان پانچویں وکٹ کے لئے 93 رنز کی ناٹ آؤٹ پارٹنرشپ کی بدولت ہندستانی کرکٹ ٹیم نے دوسرے ٹسٹ کے تیسرے دن چھ وکٹ باقی رہتے 126 رنز کی مضبوط برتری حاصل کر لی۔ہندستانی ٹیم نے اپنی دوسری اننگز میں 72 اوورز میں چار وکٹ کے نقصان پر 213 رنز بنا لئے ہیں اور اسے اب 126 رنز کی اہم برتری حاصل ہے۔ پجارا اور رہانے فی الحال میدان پر ڈٹے ہوئے ہیں۔اننگز میں اوپنر راہول نے 51 رنز کی اہم نصف سنچری اننگز کھیلی اور اچھی شروعات دلائی اور اس کے بعد پجارا اور رہانے نے پانچویں وکٹ کے لئے 33.5 اوور میں 93 رن کی ناٹ آؤٹ ساجھیداری سے دن کا کھیل ختم ہونے تک ہندوستان کو مضبوط برتری دلا دی۔سیریز میں اب تک یہ کسی جوڑی کی سب سے زیادہ شراکت بھی ہے۔اس سے پہلے 82 رنز کی سب سے زیادہ شراکت میٹ رینشا اور ڈیوڈ وارنر نے کی تھی۔ ابھینو مکند 16 رن، وراٹ کوہلی 15 رنز اور رویندر جڈیجہ دو رن بنا کر جلد آؤٹ ہوگئے حالانکہ جڈیجہ کو بیٹنگ کے لئے اوپر روانہ کیا گیا تھا۔ہندستان کی دوسری اننگز میں آسٹریلیائی بولروں نے میزبان بیٹسمینوں پر دباؤ بنانے کا اچھی کوشش کی اور چائے کے وقفہ تک ہندوستان کو 122 رن پر ہی چار نقصانات برداشت کرنے پر مجبور کیا۔جوش ہیزل ووڈ نے 57 رن پر سب سے زیادہ تین وکٹیں لیں جبکہ سٹیو او کیف کو 28 رن پر ایک وکٹ ملی ۔ پجارا نے 173 گیندوں کی اننگز میں چھ چوکے لگا کر ناٹ آؤٹ 79 رنز بنائے جو ان کی ٹسٹ میں 14 ویں نصف سنچری بھی ہے۔ رہانے نے دوسرے سرے پر ان کا اچھا ساتھ دیا اور 105 گیندوں کی اننگز میں تین چوکے لگا کر ناٹ آؤٹ 40 رنز بنائے۔ اوپنر راہول نے ابھینو مکند کے ساتھ 39 رن جوڑے مکند لیکن 16 رنز بنا کر ہیزل ووڈ کی گیند پر بولڈ ہوئے ۔اس کے بعد راہول اور پجارا نے دوسرے وکٹ کے لئے 45 رن جوڑے‘ لیکن اس شراکت پر جلد روک کیف نے لگا دیا اور راہول کپتان اسٹیون اسمتھ کو کیچ دے بیٹھے ۔کپتان ویراٹ کوہلی اس مرتبہ پھر ناکام ہوئے اور 25 گیندوں کی اننگز میں ایک چوکا لگا کر 15 رنز ہی بنا سکے۔کوہلی کو بھی ہیزل ووڈ نے ایل بی ڈبلیو آوٹ کیا۔وراٹ کو امپائر نے فوراً ایل بی ڈبلیو دیا لیکن ہندستانی کپتان نے اس کا ریویو مانگا۔یہ کافی قریبی معاملہ تھا کہ گیند نے پہلے پیڈ کو نشانہ بنایا ہے یا بیٹ کو۔میدانی امپائر نے کوہلی کو آؤٹ دیا تھا، پھر امپائر کیٹل بورو نے بھی کہا کہ فی الحال کوئی ٹھوس ثبوت نہیں ہے کہ گیند پہلے کہاں لگی۔بالآخر کچھ دیر بحث کے بعد ہندستانی کپتان کو پویلین ہی جانا پڑا۔کوہلی پہلی اننگز میں بھی 12 رنز ہی بنا سکے تھے۔قبل ازیںآج صبح جڈیجہ نے 63 رن پر چھ وکٹ لے کر آسٹریلیائی ٹیم کی پہلی اننگز کو صبح کے سیشن میں 122.4 اوور میں 276 رنز پر سمیٹنے میں مدد کی جس سے مہمان ٹیم 87 رنز کی ہی برتری حاصل کرسکی۔ایم چنا سوامی اسٹیڈیم پر مہمان ٹیم نے چھ وکٹ پر 237 رنز سے اپنی اننگز کو آگے بڑھایا تھا اور اس کے پاس کل کی 48 رنز کی برتری تھی۔تاہم ٹیم کے باقی چار کھلاڑی برتری میں محض 39 رنز کا ہی اضافہ کر سکے ۔

Leave a Reply

TOPPOPULARRECENT