Tuesday , August 22 2017
Home / ہندوستان / ہند ۔ چین فوج کے مابین معمولی جھڑپ ، مٹھائی کا تبادلہ

ہند ۔ چین فوج کے مابین معمولی جھڑپ ، مٹھائی کا تبادلہ

نئی دہلی ۔ 15 جون (سیاست ڈاٹ کام) ہندوستانی فوج اور چین کی پیپلز لبریشن آرمی (پی ایل اے) کے مابین اس وقت جھڑپ ہوگئی جب تقریباً 276 چینی سپاہی چار مختلف سرحدی راستوں سے اروناچل پردیش میں گھس آئے تھے۔ یہ واقعہ جمعرات کو حقیقی خط قبضہ پر شنکر ٹیکری کے مقام پر پیش آیا۔ پی ایل اے کا یہ دعویٰ ہیکہ یہ علاقہ چین کا ہے۔ یہاں ہندوستانی فوج تعینات ہے جس نے فوری سارے علاقہ کا محاصرہ کرلیا اور چینی فوج کو حقیقی خط قبضہ سے ہندوستانی علاقہ میں جارحیت کا مظاہرہ کرنے سے روک دیا۔ معمول کی بیانر ڈرل کے دوران پی ایل اے کی فوج نے جارحانہ موقف اختیار کرتے ہوئے ہندوستانی فوجی حملہ کی کوشش کی لیکن اسے ناکام بنادیا گیا۔ ذرائع نے بتایا کہ فوج نے سرکاری طور پر کہا کہ شنکر ٹیکری میں فوج اور پی ایل اے کے مابین ہلکی جھڑپ ہوئی۔ اس دوران منسٹر آف اسٹیٹ داخلہ کرن رجیجو نے کہا کہ یہ جھڑپ چاکلیٹس کے تبادلہ کے بعد ختم ہوئی۔ انہوں نے نئی دہلی میں ذرائع ابلاغ کے نمائندوں سے بات چیت کرتے ہوئے کہا کہ چین کی فوج مٹھاس لئے واپس ہوگئی۔

TOPPOPULARRECENT