Sunday , August 20 2017
Home / Top Stories / ہند ۔ کینیا 7معاہدے باہمی صیانتی تعاون میں اضافہ

ہند ۔ کینیا 7معاہدے باہمی صیانتی تعاون میں اضافہ

44.95ملین امریکی ڈالر مالیتی لائن آف کریڈٹ کا اعلان ‘ وزیراعظم اور صدر کینیا کی مشترکہ پریس کانفرنس
نیروبی ۔11جنوری ( سیاست ڈاٹ کام ) باہمی تعلقات میں اضافہ کی کوشش کرتے ہوئے ہندوستان اور کینیا نے فیصلہ کیا کہ کئی شعبوں میں باہمی تعاون میں اضافہ کیا جائے گا جب کہ دونوں ممالک کے درمیان سات معاہدوں بشمول دفاع ‘ صیانت اور دوہری محصول اندازی سے گریز کے معاہدے کئے گئے ۔ وزیراعظم نریندر مودی نے صدر کینیا اوہورو کینیاٹاسے بات چیت کے بعد 44.95 امریکی ڈالر مالیتی رعایتی لائن آف کریڈٹ کینیا کو دینے کا اعلان کیا تاکہ اس ملک کی ترقی میں چھوٹی اور اوسط درجہ کی صنعتیں اور ٹکسٹائلس قائم کرتے ہوئے اس افریقی ملک کو ترقی دی جاسکے ۔ ہندوستان ایک کینسر ہاسپٹل بھی تعمیر کرے گا تاکہ معیاری اور واجبی خرچ پر حفظان صحت کی خدمت فراہم کی جاسکے ۔ کثیر جہتی ترقیاتی شراکت داری باہمی تعلقات کا کلیدی ستون ہونے کا دعویٰ کرتے ہوئے وزیراعظم مودی نے ایک مشترکہ پریس کانفرنس کے دوران صدر کینیا کے ساتھ یہ بات کہی ۔ انہوں نے کہا کہ صدر کینیا اور انہوں نے اس بات سے اتفاق کیا ہے کہ دہشت گردی اور بنیاد پرستی دونوں ممالک ‘ علاقہ اور پوری دنیا کیلئے مشترک خطرہ ہے ۔ چنانچہ باہمی صیانتی شراکت داری میں مزید اضافہ کیا جائے گا ۔ اسے فائبر سیکیورٹی ‘ منشیات اور برڈھ فروشی کے شعبوں تک توسیع دی جائے گی ۔ مودی نے کہا کہ دفاعی تعاون جس پر دستخط ہوچکے ہیں ارکان عملہ کے باہمی تبادلوں ‘ مہارتوں میں شراکت داری ‘ تربیت اور ہائیڈرو گرافی میں تعاون اور آلات کی سربراہی میں مدد فراہم کرے گا ۔ مودی نے کہا کہ دونوں ممالک صیانت کے بشمول بحری صیانت مشترکہ مسائل رکھتے ہیں کیونکہ دونوں کا تعلق بحرہند سے ہیں ۔ وزیراعظم نے کہا کہ ہندوستان ترقی کے اپنے تجربہ اور مہارت میں کینیا کے ترقیاتی مقاصد کیلئے شراکت داری پر تیار ہے ۔ انہوں نے اعلان کیا کہ ہندوستان کینیا میں کینسر ہاسپٹل کی بھرپور مالی امداد کرے گا ۔ انہوں نے کہا کہ اس سے نہ صرف کینیائی معاشرہ کے معیار اور واجبی خرچ پر حفظان صحت میں مدد ملے گی بلکہ ہندوستان ایک علاقائی طبی مرکز بن جائے گا ۔ کینیاٹا نے لائن آف کریڈٹ کیلئے ہندوستان کا شکریہ ادا کیا ۔ ٹکسٹائلس فیکٹری میں بہتری پیدا کرنے کیلئے 29.95ملین امریکی ڈالر اور ایس ایم ایز اور کینسر ہاسپٹل کی تعمیر کیلئے 15ملین امریکی ڈالر ہندوستان کی جانب سے دیئے جائیں گے ۔ انہوں نے کہا کہ وہ شخصی طور پر فیصلوں پر عمل آوری کی نگرانی کریں گے ۔ انہوں نے کہا کہ یہ فیصلے باہمی شراکت داری کو گہرا کرنے میں دوررس ثابت ہوں گے اور خوشحالی میں اضافہ ہوگا ۔ دفاع اور صیانت کے بارے میں بات چیت کے علاوہ دوہری محصول اندازی سے گریز اور دو لائن آف کریڈٹ پر بھی  بات چیت ہوئی ۔ ویزا ‘ مکانوں کی تعمیر اور معیاروں کی پیمائش کے شعبوں میں معاہدے کئے گئے ۔ کینیا کو ایک قابل قدر دوست اور قابل بھروسہ ہندوستان کا شراکت دار قرار دیتے ہوئے مودی نے کہا کہ دونوں ممالک کے تعلقات دیرینہ اور مشترکہ سامراج کے خلاف جدوجہد کی مشترکہ تاریخ رکھتے ہیں ۔عوام سے عوام کے روابط کی تاریخ ایک مضبوط بنیاد فراہم کرتی ہیں جس پر دونوں ممالک کی کئی شعبوں میں شراکت داری قائم ہے ۔ یہ شراکت داری زراعت اور صحت سے لیکر ترقی میں امداد تک شامل ہے ۔قبل ازیں وزیراعظم نریندر مودی نے صدر کینیا کے ان کے اعزاز میں ترتیب دی ہوئی ضیافت میں شرکت کی۔

TOPPOPULARRECENT