Thursday , May 25 2017
Home / شہر کی خبریں / ہوٹلس اور گوشت کی دکانات پر بلدی عہدیداروں کے دھاوے

ہوٹلس اور گوشت کی دکانات پر بلدی عہدیداروں کے دھاوے

اپل میں ایک ہوٹل مہر بند اور دیگر کئی کو جرمانے ، سوپر مارکٹس پر بھی نظر
حیدرآباد۔10اپریل (سیاست نیوز) شہر کی ہوٹلوں میں بیت الخلاء کی سہولت نہ فراہم کئے جانے اور صفائی پر توجہ نہ دیئے جانے پر جی ایچ ایم سی نے ہوٹلوں کے ساتھ گوشت فروخت کرنے والے شاپنگ مالس کو بھاری جرمانے عائد کرنا شروع کردیا گیا ہے۔ مجلس بلدیہ عظیم تر حیدرآباد کی جانب سے کی جانے والی کاروائی کے دوران آج بھی شہر کے اطراف اپل ‘ تارناکہ اور دیگر علاقوں میں ہوٹلوں پر دھاوے کرتے ہوئے فراہم کی جانے والی اشیائے خورد و نوش کے علاوہ صفائی کے انتظامات کا جائزہ لیا گیا اور کئی ہوٹلوں کو بھاری جرمانے عائد کرنے کے علاوہ ایک ہوٹل کو غیر معیاری اشیائے خورد و نوش رکھنے کی پاداش میں مہربند کردیا گیا۔اپل میں واقع ہوٹل بریانی دربار کو بلدی عہدیداروں نے غیر معیاری اشیائے خورد و نوش سربراہ کرنے اور رات میں بچ جانے والے کھانوں کو فریج کرتے ہوئے صبح فروخت کرنے کی پاداش میں مہر بند کردیااور لائسنس کی تنسیخ کے متعلق اقدامات کرنے کا فیصلہ کیا گیا ہے۔بریانی دربار ہوٹل کو جی ایچ ایم سی نے 10ہزار روپئے جرمانہ عائد کیا جبکہ رامنتا پورمیں واقع ہوٹل سواگت گرانڈ میں بیت الخلاء صاف نہ رکھنے پر ہوٹل انتظامیہ کو 5ہزار روپئے کا جرمانہ عائد کیاگیا۔ آئی ڈی پی ایل چوارہے پر واقع ستارہ بار اینڈ ریسٹورینٹ پر دھاوے کے دوران بلدی عہدیداروں نے غیر معیاری اور غیر قانونی طور پر ذبح کئے گئے گوشت کے استعمال پر ہوٹل انتظامیہ کو 20ہزار روپئے کا جرمانہ عائد کیا۔اسی طرح کاپرا میں واقع رتنا ریسٹورینٹ میں بیت الخلاء میں عدم صفائی پر ہوٹل انتظامیہ کو 20ہزار روپئے کا جرمانہ عائد کیا گیا۔مجلس بلدیہ حیدرآباد کے عہدیداروں کی جانب سے شہر کے سوپر مارکٹس میں جہاں گوشت فروخت کیا جاتا ہے ان پر بھی دھاوے کئے جانے لگے ہیں تاکہ اس بات کا جائزہ لیا جاسکے کہ ان سوپر مارکٹس میں فروخت کیا جانا والا گوشت قانونی ذبیحہ ہے یا پھر ان کے پاس بھی خانگی طور پر ذبح کردہ گوشت ہی فروخت کیا جا رہا ہے ۔ہوٹل مالکین جی ایچ ایم سی کی اس کاروائی کو بلدیہ میں دولت جمع کرنے کی کوشش قرار دے رہے ہیں جبکہ جی ایچ ایم سی کے اعلی عہدیداروں کا کہنا ہے کہ شہر میں موجود ہوٹلوں کی جانب سے غیر معیاری اشیائے خورد و نوش کی فروخت کے علاوہ صفائی کے عدم انتظامات کی شکایات کے سبب جی ایچ ایم سی نے حرکت میں آتے ہوئے یہ کاروائی شروع کی ہے جس کے مثبت نتائج برآمد ہونے لگے ہیں۔ہوٹلوں میں بنیادی سہولتوں کی فراہمی اورصفائی کے انتظامات نہ ہونے کے سبب کئی شکایات موصول ہونے لگی ہیں اور ان شکایات کی بنیاد پر بھی اب کاروائی کی جانے لگی ہے۔

Leave a Reply

TOPPOPULARRECENT