Tuesday , September 19 2017
Home / عرب دنیا / یمن پر اتحادی افواج کا قبضہ، ہزاروں پھنس گئے

یمن پر اتحادی افواج کا قبضہ، ہزاروں پھنس گئے

صنعاء۔ 25 اکٹوبر (سیاست ڈاٹ کام) یمن ایران کی حمایت یافتہ باغیوں کے صنعاء  اور ملک کے بیشتر علاقہ پر قبضہ کے بعد سے خانہ جنگی سے دہلتا رہا۔ چنانچہ سعودی زیرقیادت اتحادی افواج نے مارچ 2015ء میں بین الاقوامی مسلمہ حکومت کی تائید میں یمن پر حملے شروع کردیئے۔ یمن پر اتحادی افواج نے بحریہ اور فضائیہ کی مدد سے قبضہ کرلیا ہے۔ اتحادی افواج کے ترجمان میجر جنرل احمد اسیری نے یمن کی ’’ناکہ بندی‘‘ کی تردید کردی ہے۔ اقوام متحدہ کی ثالثی سے امن مذاکرات کے کئی دور جن کا مقصد خانہ جنگی کا خاتمہ تھا، ناکام ہوچکے ہیں۔ صنعاء انٹرنیشنل ایرپورٹ 9 اگست سے اتحادی افواج کے فضائی حملوں کے بعد بند کردیا گیا ہے جس کو کئی دن بعد کھولا گیا لیکن صرف انسانی بنیاد پر امدادی پروازوں کیلئے اس کی کشادگی عمل میں آئی۔ 9 اگست سے فضائی حملوں کا دوبارہ آغاز ہوگیا جبکہ کویت میں امن مذاکرات کا آخری دور ناکام ہوگیا۔ صنعا انٹرنیشنل ایرپورٹ کے بند ہوجانے سے طبی امداد سے محروم کئی  افراد روزانہ ہلاک ہورہے ہیں اور ہزاروں افراد بشمول طلبہ یمن میں پھنسے ہوئے ہیں۔

TOPPOPULARRECENT