Thursday , August 24 2017
Home / شہر کی خبریں / یوتھ بینک اسکیم شروع کرنے حکومت کی تجویز

یوتھ بینک اسکیم شروع کرنے حکومت کی تجویز

یومیہ دس روپئے جمع کرنے پر ایک لاکھ کا قرض ، 18 تا 35 سال عمر کے افراد استفادہ کے اہل
حیدرآباد۔9مئی (سیاست نیوز) نوجوان روزانہ 10روپئے جمع کرتے ہوئے حکومت سے ایک لاکھ تک کی گرانٹ حاصل کر پائیں گے۔ حکومت کی نئی اسکیم کے ذریعہ نوجوانوں کی حوصلہ افزائی اور ان میں جمع بندی کا شوق پیدا کرنے کے لئے شروع کی جا رہی اسکیم سے 18تا35برس کے نوجوان استفادہ حاصل کرسکتے ہیں۔ حکومت تلنگانہ نوجوانوں کو بینکوں سے قرض کے حصول میں پیش آرہی دشواریوں کو دور کرنے کیلئے ’’یوتھ بینک‘‘ کے قیام کے منصوبہ کو قطعیت دینے میں مصروف ہے۔ حکومت کی اس اسکیم کے ذریعہ نوجوان حکومت سے ایک لاکھ تک کی گرانٹ حاصل کر پائیں گے۔ حکومت تلنگانہ نے بے روزگار نوجوانوں کی مدد کرتے ہوئے انہیں روزگار سے مربوط کرنے اور تجارت کے آغاز کا موقع فراہم کرنے کا فیصلہ کیا ہے۔ اسکیم کی تفصیلات کے مطابق نوجوان 10تا15کے گروپ کی شکل میں روزانہ 10روپئے 6ماہ تک جمع کرتے ہیں تو انہیں حکومت کی جانب سے 6ماہ کا عرصہ مکمل ہونے پر اس گروپ کو حکومت کی جانب سے ایک لاکھ روپئے بطور گرانٹ دیئے جائیں گے۔ متحدہ ریاست آندھرا پردیش میں مائیکرو فینانس کے مسائل سے نمٹنے کیلئے حکومت کی جانب سے قائم کردہ خواتین کیلئے مخصوص بینک کے طرز پر حکومت تلنگانہ نوجوانوں کیلئے مخصوص ’’ یوتھ بینک ‘‘ کے آغاز کی منصوبہ بندی میں مصروف ہے۔ مسٹر ٹی پدما راؤ گوڑ ریاستی وزیر یوتھ افئیرس نے بتایا کہ ریاست کے نوجوانوں کی ترقی کو یقینی بنانے کیلئے شروع کردہ اس اسکیم کے سلسلہ میں عہدیداروں کو ہدایت دی جا چکی ہے کہ وہ ریاست کے تمام اضلاع میں 10تا15 نوجوانوں پر مشتمل 1000گروپس تشکیل دیں تاکہ ریاست میں 10000گروپس کی تشکیل کے بعد ’’یوتھ بینک ‘‘ کی جانب پیشرفت کو یقینی بنایا جا سکے۔ انہوں نے مزید بتایا کہ حکومت کی جانب سے ہر سال گروپس کی تعداد میں اضافہ کے اقدامات کئے جائیں گے۔عہدیداروں کے بموجب اگر 10نوجوانوں پر مشتمل گروپ کی تشکیل عمل میں لائی جاتی ہے تو ایسی صورت میں ایک گروپ 6ماہ یومیہ 10روپئے کے حساب سے 18000ہزار روپئے جمع کرسکتا ہے جبکہ 15ارکان کا گروپ یومیہ 10روپئے کے حساب سے 6ماہ کے دوران 27000روپئے جمع کر سکتا ہے جنہیں حکومت کی ایک لاکھ تک کی گرانٹ حاصل ہوگی ۔ ابتدائی طور پر اس اسکیم کا آغاز بینک کے ذریعہ نہیں ہو گا بلکہ ریاست میں 10000نوجوانوں کے اسکیم سے مربوط ہونے کے بعد ہی اس اسکیم کو بینک سے مربوط کیا جائے گا جو کہ ’’ستری ندھی بینک‘‘ کے طرز پر نوجوانوں کیلئے مخصوص ہوگا۔ اس اسکیم سے بیروزگار نوجوان اور معمولی ملازمت پیشہ نوجوان استفادہ حاصل کرسکتے ہیں۔

TOPPOPULARRECENT