Saturday , September 23 2017
Home / ہندوستان / یوم آزادی اور یوم جمہوریہ تفریح بن کر رہ گئے : شیوسینا

یوم آزادی اور یوم جمہوریہ تفریح بن کر رہ گئے : شیوسینا

ممبئی۔15 اگست (سیاست ڈاٹ کام) شیوسینا نے آج کہا ہے کہ یوم آزادی اور یوم جمہوریہ تقاریب محض تفریح بن کر رہ گئے ہیں اور یہ جاننا چاہا کہ گزشتہ 70 سال میں کیا ملک نے فی الواقعی آزادی حاصل کرلی؟ پارٹی کے ترجمان ’’سامنا‘‘ میں شائع اداریہ میں لکھا گیا ہے کہ 1947ء میں ہمارے لئے ملک کی آزادی ایک چیلنج تھا اور 2017ء میں ملک کی آزادی کا ’’تحفظ‘‘ ایک چیلنج ہے۔ شیوسینا نے جو بی جے پی کی حلیف ہے، کئی سوالات اٹھائے اور یہ جاننا چاہا کہ کیا عام آدمی کو غربت، ناخواندگی، معاشی اور سماجی برائیوں سے آزادی مل چکی ہے۔ پارٹی نے کہا کہ کیا ہم داخلی اور خارجی خطرات کو ختم کرپائے ہیں؟ ہمیں 70 سال کے بعد ان سوالات کا جواب دینا ہوگا۔

بھاگوت کی سرکاری احکام کی خلاف ورزی کرتے ہوئے پرچم کشائی
پلکڑ(کیرالا)۔ 15 اگست (سیاست ڈاٹ کام) کیرالا میں سی پی آئی زیرقیادت حکومت کے احکامات کی خلاف ورزی کرتے ہوئے آر ایس ایس سربراہ موہن بھاگوت نے پلکڑ میں واقع ایک اسکول میں قومی پرچم کشائی انجام دی۔ ضلع کلکٹر نے رات دیر گئے احکامات جاری کرتے ہوئے بتایا کہ یہ گورنمنٹ ایڈیڈ اسکول ہے اور پروٹوکول کے مطابق کوئی منتخبہ نمائندہ یا اسکول حکام ہی پرچم کشائی انجام دے سکتے ہیں۔ آر ایس ایس سربراہ نے اپنے موقف کا دفاع کرتے ہوئے انہوں نے اسکول حکام سے مشاورت کے بعد انہوں نے پرچم کشائی انجام دی۔

TOPPOPULARRECENT