Monday , August 21 2017
Home / کھیل کی خبریں / یونس خان کا ونڈے کرکٹ سے ریٹائرمنٹ

یونس خان کا ونڈے کرکٹ سے ریٹائرمنٹ

انگلینڈ کیخلاف میچ سے قبل اعلان ، ٹسٹ کے مقابل ونڈے میچز میں بیٹنگ اوسط غیرمتاثرکن
ابوظہبی ، 11 نومبر (سیاست ڈاٹ کام) پاکستان کے ویٹرن بیٹسمن یونس خان نے ونڈے انٹرنیشنل کرکٹ سے اپنے ریٹائرمنٹ کا اعلان کرتے ہوئے کہا ہے کہ انگلینڈ کے خلاف آج یہاں پہلا ڈے۔ نائیٹ میچ اُن کا آخری او ڈی آئی رہے گا۔ میڈیا کیلئے جاری کردہ ایک بیان میں یونس نے کہا کہ کسی کرکٹر کیلئے انٹرنیشنل کرکٹ میں 15 سال گزار لینے کے بعد بھی یہ فیصلہ کرنا کبھی آسان نہیں رہا کہ کب سبکدوشی اختیار کی جائے۔ ’’میں خوش قسمت ہوں کہ میں اپنے طور پر فیصلہ کرپایا ہوں کہ T20 انٹرنیشنلس اور او ڈی آئیز میں کب سبکدوشی اختیار کروں،‘‘ یونس نے یہ بات کہی۔ پاکستان کے نیشنل سلیکٹرز نے ایک حیران کن اقدام میں یونس کو انگلینڈ کے خلاف چار میچ کی او ڈی آئی سیریز کیلئے طلب کیا جبکہ انھیں اس فارمٹ کیلئے آسٹریلیا اور نیوزی لینڈ میں رواں سال کے اوائل منعقدہ ورلڈ کپ کے بعد سے مسلسل نظرانداز کیا جاتا رہا تھا۔ 37 سالہ بیٹسمن آج اپنا 265 واں ونڈے انٹرنیشنل کھیل رہے ہیں، جبکہ لگ بھگ 16 سال قبل فبروری 2000ء میں انھوں نے کراچی میں سری لنکا کے خلاف اپنا کریئر شروع کیا تھا۔ اپنے آخری او ڈی آئی میں شرکت سے قبل یونس ونڈے کرکٹ میں سات سنچریوں اور 48 ہاف سنچریز کے ساتھ 7,240 رنز اسکور کرچکے ہیں۔ مارچ 2013ء سے یونس کو صرف 11 او ڈی آئیز کیلئے منتخب کیا گیا، جس نے 50 اوور والے فارمٹ میں اُن کے مستقبل پر بڑا سوالیہ نشان لگا دیا۔ سابق کپتان نے کہا: ’’میں نے سبکدوشی کا فیصلہ میرے دوستوں، معاونین اور فیملی سے مشاورت کے بعد کیا ہے۔ کسی بھی فارمٹ سے سبکدوشی کبھی آسان نہیں ہوتی۔ لیکن مجھے خوشی ہے کہ میں پاکستان کی کئی فتوحات میں مرکزی کردار ادا کرنے میں کامیاب رہا ہوں۔ میں پاکستان کرکٹ کے مستقبل سے مطمئن ہوں کیونکہ ہمارے ملک میں ٹیلنٹ کی قلت نہیں اور مجھے یقین ہے نوجوان کھلاڑی بھی اسی طرح جوش و جذبہ سے کھیلتے ہوئے ڈسپلن اور فٹنس پر سختی سے کاربند رہیں گے۔‘‘ یونس جو گزشتہ چند برسوں سے ٹسٹ کرکٹ میں زبردست فام میں رہے ہیں اور 9000 ٹسٹ رنز اسکور کرتے ہوئے اولین پاکستانی بیٹسمن بن گئے نیز 31 سنچریاں بھی لگا چکے ہیں، وہ اس کے برخلاف 50 اوور کے فارمٹ میں جدوجہد کرتے دکھائی دیئے جیسا کہ 264 میچز میں اُن کا اوسط محض 31.34 ہے۔ ٹسٹ کرکٹ میں وہ 104 میچوں میں 53.94 کا اوسط رکھتے ہیں۔ سینئر کرکٹر نے پاکستان کی قیادت کرتے ہوئے انھیں اپنا واحد ورلڈ T20 ٹائٹل انگلینڈ میں 2009ء میں جتوایا تھا، جس کے بعد وہ حیران کن انداز میں اس فارمٹ سے ریٹائر ہوگئے۔

TOPPOPULARRECENT