Saturday , July 29 2017
Home / سیاسیات / یوپی میں تیسرے مرحلہ کی انتخابی مہم کا اختتام

یوپی میں تیسرے مرحلہ کی انتخابی مہم کا اختتام

لکھنؤ 16 فروری (سیاست ڈاٹ کام) یوپی میں 69 اسمبلی حلقوں کے لئے جہاں اتوار کے دن رائے دہی مقرر ہے، انتخابی مہم آج شام اختتام پذیر ہوئی۔ قائدین نے رائے دہندوں کو ترغیب دینے کے لئے ہر ممکن کوشش کی۔ تیسرے مرحلہ کی رائے دہی کے اسمبلی حلقے 12 اضلاع میں پھیلے ہوئے ہیں۔ وزیراعظم نریندر مودی اور صدر بی جے پی امیت شاہ نے بھگوا پارٹی کی انتخابی مہم، چیف منسٹر یوپی اکھلیش یادو نے سماج وادی پارٹی ۔ کانگریس اتحاد کی انتخابی مہم اور بی ایس پی کی سربراہ مایاوتی نے بہوجن سماج پارٹی کی انتخابی مہم کی قیادت کی۔ کانگریس قائد راہول گاندھی نے مودی پر سخت تنقید کی اور الزام عائد کیاکہ اُنھوں نے اچھے دن کا وعدہ کرتے ہوئے عوام کے ساتھ غداری کی ہے۔ نریندر مودی اور امیت شاہ نے دوسری طرف برسر اقتدار سماج وادی پارٹی پر الزام عائد کیاکہ ریاست میں اُس کی وجہ سے کرپشن پھیلا ہوا ہے اور نظم و قانون کی صورتحال ابتر ہوگئی ہے۔ وزیراعظم نے بار بار اکھلیش کی انتخابی مہم کو ناکام بنانے کی کوشش کی۔ اکھلیش یادو نے ’’کام بولتا ہے‘‘ کا نعرہ دیا تھا۔ جبکہ بی جے پی نے کہاکہ اکھلیش یادو کی کارناموں کی وجہ سے ہی یوپی کی حالت ابتر ہوگئی ہے۔ تاہم اکھلیش یادو نے اُن پر تنقید کی پرواہ کئے بغیر ترقیاتی اسکیموں اور فلاحی اقدامات کا تذکرہ جاری رکھا۔ اُنھوں نے کہاکہ پہلے دو مرحلوں میں رائے دہندوں کی تعداد پر اپوزیشن کا بلڈ پریشر بڑھ گیا ہے۔

TOPPOPULARRECENT