Tuesday , March 28 2017
Home / سیاسیات / یوپی میں لاقانونیت کی عدالتی توثیق :بی جے پی

یوپی میں لاقانونیت کی عدالتی توثیق :بی جے پی

لکھنؤ، 16 فروری (سیاست ڈاٹ کام) بی جے پی نے آج کہا کہ الہ آباد ہائی کورٹ نے ہمارے ان الزامات کی تصدیق کردی ہے کہ اترپردیش میں اکھلیش یادو کی نہیں مجرموں کی حکومت ہے ۔عدالت نے سماج وادی پارٹی لیڈر اور مافیا ڈان عتیق احمد کے مقدمہ کی سماعت کے دوران یہ تبصرہ کیا کہ لگتا ہے کہ ریاست میں جرائم پیشہ افراد کی حکومت ہے ۔ اترپردیش کے جنرل سکریٹری وجے بہادر پاٹھک نے یہاں دعوی کیا کہ سماج وادی کا کام بولتا ہے ،یہ  دعوی ہائی کورٹ کے تبصرے سے غلط ثابت ہوگیا ہے جس سے یہ بھی ثابت ہوتا ہے کہ ریاستی حکومت کا مجرموں کے ساتھ گٹھ جوڑ ہے۔مسٹر پاٹھک نے دعوی کیا کہ یوپی کے حالات اس حد تک خراب ہوچکے ہیں کہ ہائی کورٹ کو اتنا سخت تبصرہ کرنا پڑا جس کا مطلب ہے کہ ریاست میں قانون کی حکمرانی نہیں ہے ۔ مسٹر پاٹھک نے کہاکہ ووٹر یوپی میں صاف ستھری حکومت چاہتے ہیں اور انہوں نے اس کیلئے دو مرحلوں میں ووٹ دیا ہے اور آئندہ بھی دیں گے۔ وہ ایسی حکومت چاہتے ہیں جو عوام کیلئے کام کرے ۔کل الہ آباد ہائی کورٹ کے عتیق انصاری سے متعلق کیس میں سوال اٹھایا تھا کہ یہ کیسے ممکن ہیکہ ایک مجرم ضمانت پر ہوتے ہوئے جرائم کرتا رہے اور ریاستی حکومت اس کی ضمانت منسوخ کرنے کیلئے کچھ نہ کرے ۔

Leave a Reply

TOPPOPULARRECENT