Sunday , September 24 2017
Home / Top Stories / یوپی کے ہتھراس ٹاؤن میں گوشت کی دکانیں نذرآتش

یوپی کے ہتھراس ٹاؤن میں گوشت کی دکانیں نذرآتش

کانشی رام کالونی میں خوف و ہراسانی، نامعلوم افراد کے خلاف ایف آئی آر درج
ہتھراس ۔ 22 مارچ (سیاست ڈاٹ کام) اترپردیش پولیس نے کہا ہیکہ ہتھراس علاقہ میں بعض نامعلوم افراد نے مویشی اور مچھلی کا گوشت فروخت کرنے والی تین دکانات کو نذرآتش کردیا، جس کے ساتھ ہی اس علاقہ میں خوف و سنسنی کی لہر دوڑ گئی۔ یوگی آدتیہ ناتھ کی قیادت میں بی جے پی حکومت کی حلف برداری کے بعد اترپردیش میں چند مسالخ مہربند کردیئے گئے تھے اور اس دوران گوشت کی تین دوکانات کو نذرآتش کرنے کا واقعہ پیش آیا ہے۔ پولیس نے کہا ہیکہ مانیاور کانشی رام کالونی میں کل رات یہ واقعہ پیش آیا۔ ان دوکانات کے مالکین نے کہا ہیکہ آتشزنی کے سبب دوکانوں میں موجود سارا اسٹاک خاکستر ہوگیا ہے۔ ہتھراس کے پولیس سپرنٹنڈنٹ دلیپ کمار سریواستوا نے کہا کہ ’’چند نامعلوم افراد نے مویشیوں اور مچھلی کا گوشت فروخت کرنے والی تین دوکانات کو نذرآتش کردیا جن کے خلاف ایف آئی آر درج کیا گیا ہے‘‘۔ سب ڈیویژنل مجسٹریٹ (ہتھراس صدر) راکیش گپتا نے بعدازاں متاثرہ دکانات کے مالکین سے ملاقات کرتے ہوئے شکایات کی سماعت کی۔ بی جے پی نے اپنے انتخابی منشور میں وعدہ کیا تھا کہ برسراقتدار آنے کی صورت میں تمام غیرقانونی اور حتیٰ کہ بعض قانونی مسالخ بند کردیئے جائیں گے۔ عصری ٹیکنالوجی پر مبنی مسالخ پر بھی امتناع عائد کردیا جائے گا۔ ضلع حکام نے گذشتہ روز کمل گڈھا علاقہ میں  ایک مسلخ کو مہربند کردیا جو غیرقانونی طور پر چلایا جارہا تھا۔ غازی آباد پولیس نے گذشتہ روز گوشت کی 10 دوکانات اور چار مسالخ کو بند کردیا تھا۔

 

یوپی میں تمام مسالخ بند کرنے چیف منسٹر کی ہدایت
لکھنؤ ۔ 22 مارچ (سیاست ڈاٹ کام) بی جے پی کے انتخابی منشور کے خطوط کے مطابق اترپردیش کے نئے چیف منسٹر یوگی آدتیہ ناتھ نے ریاست بھر میں مسالخ بند کرنے کیلئے آج پولیس عہدیداروں کو ایک منصوبہ عمل تیار کرنے کی ہدایت کی جس کے ساتھ ہی لکھنؤ میونسپل کارپوریشن بھی فوری طور پر حرکت میں آ گیا اور اس کے عہدیداروں نے ریاستی دارالحکومت میں گوشت کی 9 دوکانات کو مہر بند کردیا۔ سرکاری ذرائع نے کہا کہ آدتیہ ناتھ نے عہدیداروں سے کہا کہ گایوں کی اسمگلنگ پر مکمل امتناع کو یقینی بنایا جائے نیز ان سرگرمیوں میں ملوث افراد کے ساتھ کوئی رعایت نہ کی جائے۔ تاہم ذرائع نے بند کئے جانے والے مسالخ کے بارے میں وضاحت یا نشاندہی نہیں کی۔ اس دوران پولیس اور بلدی حکام ریاست بھر میں غیرقانونی مسالخ کے خلاف بڑے پیمانے پر کارروائیوں کا آغاز کرچکے ہیں۔ محتلف اضلاع میں متعدد مسالخ پر دھاوے کئے گئے۔ مہانگر اور علی گنج میں گوشت کی 9 دوکانات مہربند کردی گئیں۔

TOPPOPULARRECENT