Friday , June 23 2017
Home / Top Stories / یو پی میں آج 69 حلقوں میں تیسرے مرحلہ کی رائے دہی

یو پی میں آج 69 حلقوں میں تیسرے مرحلہ کی رائے دہی

اپرنا یادو، شیوپال، ریٹابہوگنا، نتن اگروال، برجیش پاٹھک نمایاںامیدوار
لکھنو ، 18 فبروری (سیاست ڈاٹ کام) اترپردیش کے انتخابات کے تیسرے مرحلہ میں اتوار کو 69 اسمبلی حلقوں میں پولنگ کیلئے تیاریاں مکمل کرلی گئی ہیں۔ مرکزی وزیر داخلہ راجناتھ سنگھ کا لوک سبھا حلقہ، اور ایس پی کا طاقتور علاقے قنوج، مین پوری اور ایٹاوہ اس راؤنڈ میں شامل ہیں۔ فرخ آباد، ہردوئی، کانپور دیہات، کانپور، اُناؤ، بارہ بنکی اور سیتاپور 12 اضلاع میں سے ہیں جہاں یہ 69 اسمبلی نشستیں پھیلی ہوئی ہیں۔ ایٹاوہ ایس پی سرپرست ملائم سنگھ یادو کا آبائی مقام ہے، جبکہ ایک اور کلیدی ضلع مین پوری ہے جہاں سے تیج پرتاپ یادو ایس پی ایم پی ہیں۔ قنوج کی ڈمپل یادو اہلیہ چیف منسٹر اکھلیش یادو پارلیمنٹ میں نمائندگی کرتی ہیں۔ جملہ 826 امیدوار انتخابی میدان میں ہیں، جن کی قسمت کا فیصلہ 2.41 کروڑ ووٹرس بشمول 1.10 کروڑ خواتین اور تیسری جنس والے زمرہ کے 1,026 رائے دہندے طے کریں گے۔ سب سے زیادہ 21 امیدوار ایٹاوہ میں ہیں، اور حیدرباغ (بارہ بنکی) میں صرف تین امیدوار ہیں۔ لکھنو ویسٹ اور سنٹرل میں 17، 17 امیدوار ہیں۔ اس مرحلے میں ووٹنگ 25,603 پولنگ بوتھس پر منعقد کی جائے گی۔ نمایاں امیدواروں میں جن کا وقار داؤ رہے گا، نتن اگروال (فرزند ایس پی لیڈر نریش اگروال)، بی ایس پی کے غدار  برجیش پاٹھک (لکھنو سنٹرل)بی جے پی ٹکٹ پر، اور کانگریس کی غدار ریٹا بہوگنا جوشی (لکھنو کینٹ) جن کو ملائم سنگھ یادو کی بہو اپرنا کے خلاف مسابقت درپیش ہے۔ ایس پی لیڈر شیوپال بھی اس راؤنڈ کی کلیدی شخصیت ہیں۔ وہ جسونت نگر نشست سے چناؤ لڑرہے ہیں۔ کانگریس لیڈر پی ایل پونیا کے فرزند تنوج پونیا اپنی انتخابی قسمت زیدپور نشست (بارہ بنکی) سے آزما رہے ہیں۔جہاں وزیراعظم نریندر مودی اور صدر بی جے پی امیت شاہ نے زعفرانی بریگیڈ کی قیادت کی۔ یو پی میں پولنگ کے آئندہ چار مراحل 23 فبروری، 27 فبروری، 4 مارچ اور 8 مارچ کو ہوں گے۔ ووٹوں کی گنتی 11 مارچ کو مقرر کی گئی ہے۔

Leave a Reply

TOPPOPULARRECENT