Sunday , October 22 2017
Home / شہر کی خبریں / یو پی میں سماجوادی پارٹی کو دوبارہ اقتدار ممکن

یو پی میں سماجوادی پارٹی کو دوبارہ اقتدار ممکن

چھوٹی جماعتوں سے اتحاد ضروری ‘ سی پی آئی لیڈر سدھاکر ریڈی
حیدرآباد 9 جنوری ( پی ٹی آئی ) اترپردیش میں برسر اقتدار سماجودای پارٹی اگر چھوٹی جماعتوں کے ساتھ انتخابی مفاہمت کرے تو ہوسکتا ہے کہ وہ اپنے اقتدار کو بچانے میں کامیاب ہوجائے ۔ سی پی آئی کے جنرل سکریٹری ایس سدھاکر ریڈی نے یہ بات کہی ۔ انہوں نے پی ٹی آئی سے بات چیت کرتے ہوئے کہا کہ ریاست میں بہت سخت مقابلہ ہوگا ۔ ابھی یہ نہیں کہا جاسکتا کہ اگر سماجوادی پارٹی تنہا مقابلہ کرے تو وہ کامیاب ہوگی ۔ لیکن اگر وہ کچھ دوسری جماعتوں کے ساتھ مفاہمت کرتے ہیں تو یقینی طور پر وہ اقتدار پر برقرار رہ سکتے ہیں۔ انہوں نے کہا کہ بعض مرتبہ چھوٹی جماعتیں اہمیت حاصل کرجاتی ہیں۔ ہر اسمبلی حلقہ میں 2000-3000 ووٹوں کو منتقل کیا جاسکے تو موجودہ گنجلک صورتحال میں مدد مل سکتی ہے ۔ سماجوادی پارٹی میںجاری داخلی خلفشار کے تعلق سیسدھاکر ریڈی نے کہا کہ ایسا لگتا ہے کہ بیشتر قائدین اور کارکن چیف منسٹر اکھیلیش یادو کے ساتھ ہیں۔ اکھیلیش نوجوان ووٹرس کو بھی راغب کر رہے ہیں۔ انہوں نے کہا کہ ملائم سنگھ یادو نے اپنے خون پسینے سے پارٹی کوپروان چڑھایا ہے لیکن پارٹی میں ان کا اثر ان کے بھائی شیوپال یادو کی وجہ سے ختم ہوتا جا رہا ہے ۔ انہوں نے کہا کہ شیوپال کو لوگ ان کے رویہ اور طریقے کی وجہ سے پسند نہیںکرتے ۔ انہوں نے بتایا کہ مجوزہ اسمبلی انتخابات کیلئے بائیں بازو کی جماعتیں اپنی انتخابی حکمت عملی کے تعلق سے کوئی متحدہ موقف اختیار کرینگی ۔

TOPPOPULARRECENT