Friday , July 21 2017
Home / کھیل کی خبریں / ۔2011 ء ورلڈ کپ کا فائنل فکسڈ تھا:رانا تنگاکا دعویٰ

۔2011 ء ورلڈ کپ کا فائنل فکسڈ تھا:رانا تنگاکا دعویٰ

 

کولمبو۔15 جولائی (سیاست ڈاٹ کام )سری لنکا کے سابق کپتان ارجنا رانا تنگا نے ورلڈ کپ 2011 کا فائنل فکسڈ قرار دیتے ہوئے فائنل مقابلے کی فوری طور پر تحقیقات کا مطالبہ کیا ہے۔ورلڈ کپ 2011 کو چھ سال بیت چکے ہیں لیکن ہندوستان کے چیمپیئن بننے کے چھ سال بعد ارجنا رانا تنگا نے اس ایونٹ پر سوالیہ نشان لگاتے ہوئے دعویٰ کیا ہے کہ یہ ہندوستان اور سری لنکا کے درمیان کھیلا گیا فائنل فکسڈ تھا۔یاد رہے کہ سری لنکا کے سابق کپتان کا یہ بیان سابق وکٹ کیپر کمار سنگاکارا کے بیان کے بعد سامنے آیا ہے جنہوں نے کہا کہ اس بات کی تحقیقات ہونی چاہیے کہ 2009 کے دورۂ پاکستان کی اجازت کس نے دی تھی اور اس بارے میں حکام سے پوچھ گچھ ہونی چاہئے۔2009 میں پاکستان کے دورے پر گئی سری لنکائی ٹیم پر لاہور میں دہشت گردوں نے حملہ کردیا تھا جس میں چند کرکٹرز زخمی بھی ہوئے تھے اور اس حملے کے بعد پاکستان پر بین الاقوامی کرکٹ کے دروازے بند ہو گئے تھے۔رانا تنگا نے کہا کہ اگر سنگارا دورہ پاکستان کے حوالے سے تحقیقات چاہتے ہیں تو بالکل ٹھیک ہے لیکن پھر میرے خیال میں اس بات کی بھی تحقیقات ہونی چاہئے کہ 2011 کے ورلڈ کپ فائنل میں سری لنکائی ٹیم کو کیا ہوا تھا۔ میرے خیال میں وزیر کھیل کو فٹنس مسائل کے بجائے اس بات پر توجہ دینی چاہئے۔سری لنکا کو 1996 کا ورلڈ کپ جتوانے والے کپتان اس رات ممبئی میں ہونے والے فائنل کے کمنٹری پینل میں موجود تھے اور انہوں نے کہا کہ سری لنکائی ٹیم کی کارکردگی سے وہ بہت مایوس ہوئے تھے۔انہوں نے کہا کہ میں یہ تو نہیں بتا سکتا کہ اس دن کیا ہوا تھا، وقت آنے پر ایک دن اس راز پر سے ثبوتوں کے ساتھ پردہ اٹھاؤں گا لیکن اس سلسلے میں تحقیقات ہونی چاہئے۔2011 میں ممبئی کے وانکھیڈے اسٹیڈیم میں سری لنکا اور ہندوستان کے درمیان کھیلے گئے میچ میں سری لنکا نے مہیلا جے وردھنے کی سنچری کی بدولت 275 رنز اسکور بورڈ پر سجائے لیکن پھر گوتم گمبھیر اور کپتان مہندرا سنگھ دھونی کی شاندار اننگز کی بدولت ہندوستان نے 28 سال بعد چیمپیئن بننے کا اعزاز حاصل کیا تھا۔

Leave a Reply

TOPPOPULARRECENT