Monday , September 25 2017
Home / Top Stories / ۔24 ہزار روپئے نکالنے کی سہولت برقرار رکھی جائے

۔24 ہزار روپئے نکالنے کی سہولت برقرار رکھی جائے

آر بی آئی اپنے اعلامیہ کی پاسداری کرے، سپریم کورٹ کا تاثر
نئی دہلی 15 ڈسمبر (سیاست ڈاٹ کام) سپریم کورٹ نے آج کہا ہے کہ مرکز کو بڑی کرنسی کا چلن بند کرنے کے بعد بینک اکاؤنٹس سے فی ہفتہ 24 ہزار روپئے کی رقم منہا کرنے کی اجازت سے متعلق اعلامیہ کی پاسداری کرنی چاہئے۔ چیف جسٹس ٹی ایس ٹھاکر کی زیرقیادت تین ججس پر مشتمل بنچ نے سینئر ایڈوکیٹ کپل سبل کے دلائل کی سماعت کے بعد یہ احساس ظاہر کیا۔ کرنسی بند کرنے کے فیصلے کو چیلنج کرتے ہوئے عدالت میں درخواست  دائر کی گئی تھی۔ کپل سبل نے درخواست گذار کی طرف سے پیش ہوتے ہوئے کہاکہ عوام کے پاس نقد رقم نہیں ہے جس کی وجہ سے اُنھیں مشکلات پیش آرہی ہیں۔ اُنھوں نے کہاکہ آر بی آئی کے اعلامیہ کے مطابق کوئی بھی شخص فی ہفتہ 24 ہزار روپئے کی رقم اپنے اکاؤنٹ سے نکال سکتا ہے لہذا کسی کو بھی اِس حق سے محروم کرنے کا اختیار نہیں۔ اٹارنی جنرل کا یہ موقف ہے کہ کرنسی کا مسئلہ پایا جاتا ہے اور بینکوں میں خاطر خواہ نقد رقم نہیں ہے۔ اُنھوں نے کہاکہ جب رقم ہی نہیں ہے تو یہ حق بھی نہیں دیا جانا چاہئے۔ بنچ نے اٹارنی جنرل مکل روہتگی سے کہاکہ عوام کثیر تعداد میں اپنی رقم جمع کرارہے ہیں۔ آپ کو چاہئے کہ اُنھیں رقم ادا کریں۔ آپ ادائیگی میں کمی کررہے ہیں۔ آخر یہ سلسلہ کب تک رہے گا اور ہم حکومت سے یہی جاننا چاہتے ہیں۔ ہمیں اِس بات کا اندازہ ہے کہ رقم کی قلت ہے لیکن آپ کو قواعد پر عمل بھی کرنا ضروری ہے۔

TOPPOPULARRECENT