Tuesday , June 27 2017
Home / ہندوستان / ۔3 سال میں صرف 5 میڈیکل کالجس کا قیام

۔3 سال میں صرف 5 میڈیکل کالجس کا قیام

مرکزی وزارتِ صحت کا اظہارِ تشویش ، 58 کالجس کا منصوبہ
نئی دہلی۔ 8 مارچ (سیاست ڈاٹ کام) حکومت نے ملک میں میڈیکل کالجس کے قیام میں انتہائی سست روی پر تشویش کا اظہار کیا ہے۔ حکومت نے 58 کالجس کے قیام کی تجویز رکھی تھی جن میں گزشتہ تین سال کے دوران صرف 5 کالجس کا قیام عمل میں آیا۔ مرکزی وزارت صحت نے حالیہ ایک اجلاس میں 19 ریاستوں اور 3 مرکزی زیرانتظام علاقوں کو جہاں یہ کالجس قائم کئے جائیں گے، ہدایت دی ہے کہ وہ اس کام میں تیزی لائیں۔ مرکز نے 2014ء میں مختلف ریاستوں جیسے اُترپردیش، مدھیہ پردیش، راجستھان، اڈیشہ اور بہار میں ڈسمبر 2018ء تک 58 گورنمنٹ میڈیکل کالجس قائم کرنے کے منصوبہ کا اعلان کیا تھا۔ وزارت صحت کے عہدیدار نے بتایا کہ شمالی اور شمال مشرقی ریاستوں میں زیادہ آبادی کے باوجود میڈیکل کالجس کی تعداد کم ہونے کے باعث یہ فیصلہ کیا گیا ہے۔ ملک بھر میں سب سے زیادہ آبادی والی ریاست اُترپردیش میں صرف 16 سرکاری میڈیکل کالجس ہیں۔ انہوں نے دیگر ریاستوں میں موجود میڈیکل کالجس کی بھی تفصیلات بتائی اور کہا کہ یہ تشویشناک پہلو ہے۔ انہوں نے کہا کہ 58 کالجس قائم کرنے کا منصوبہ بنایا گیا، جن میں صرف 5 کالجس قائم کئے گئے۔ چھتیس گڑھ میں 2 اور مہاراشٹرا، ہماچل پردیش اور انڈومان و نکوبار جزائر میں فی کس ایک کالج قائم کیا جاسکا۔

بھوپال میں خاتون کا برسر عام قتل
بھوپال۔ 8 مارچ (سیاست ڈاٹ کام) ایک 25 سالہ خاتون کا مبینہ طور پر نامعلوم شخص نے کل رات عوام کے روبرو قتل کردیا۔ پولیس نے بتایا کہ ملزم نے سنیتا ٹھاکر کا گلا تیز دھاری ہتھیار سے کاٹ دیا۔ ٹھاکر کو اس سے پہلے منشیات کی فروخت کے الزام میں گرفتار کیا گیا تھا اور حال ہی میں اس کی ضمانت منظور کی گئی تھی۔ سنیتا ٹھاکر یہاں ایک ٹی اسٹال کی مالکہ ہے۔ وہ رات تقریباً 8 بجے اپنے ملازم کے ساتھ گھر واپس ہورہی تھی کہ نامعلوم شخص نے اس پر حملہ کردیا۔ پولیس نے بتایا کہ حملہ آور نے برسرعام اسے حملہ کا نشانہ بنایا اور راہ فرار اختیار کی۔اس واقعہ کے سلسلے میں مزید تحقیقات جاری ہیں۔

Leave a Reply

TOPPOPULARRECENT