Saturday , August 19 2017
Home / شہر کی خبریں / ۔3 لاکھ روپئے سے زائد کے لین دین پر پابندی کا امکان

۔3 لاکھ روپئے سے زائد کے لین دین پر پابندی کا امکان

خصوصی تحقیقاتی ٹیم کی سفارش پر مرکز کا غور
نئی دہلی ۔ 24 ۔ اگست : ( سیاست ڈاٹ کام ) : مرکزی حکومت خصوصی تحقیقاتی ٹیم کی اس سفارش کا جائزہ لے رہی ہے کہ 3 لاکھ روپئے سے زائد کی معاملت پر پابندی لگائی جائے تاکہ معیشت میں کالا دھن کے چلن کو روکا جاسکے ۔ راست محاصل سے متعلق سنٹرل بورڈ سی بی ڈی ٹی کی صدر نشین رانی سنگھ نائر نے یہ بات بتائی ۔ انہوں نے کہا کہ سپریم کورٹ کی مقررہ خصوصی تحقیقاتی ٹیم نے کالا دھن روکنے کے اقدام کے طور پر افراد اور انڈسٹری کے ساتھ 3 لاکھ روپئے یا اس سے زائد رقم کی معاملت پر پابندی لگانے کی سفارش کی ہے تاکہ ملک میں غیر قانونی دولت کا چلن روکا جاسکے ۔ رانی سنگھ نے کہا کہ سفارشات آچکی ہیں زائد از 3 لاکھ روپئے کے نقد لین دین پر پابندی لگانے کا جائزہ لیا جارہا ہے ۔ خصوصی تحقیقاتی ٹیم کی سفارش زیر غور ہے ۔ انکم ٹیکس محکمہ پہلے ہی نقد لین دین پر ایک فیصد ٹیکس لگا چکا ہے اور معاملت کے لیے پیان کارڈ کا لزوم رکھا ہے ۔ خصوصی تحقیقاتی ٹیم نے ریٹائرڈ جسٹس ایم بی شاہ کی سرکردگی میں ماہ جولائی میں اپنی پانچ ویں رپورٹ سپریم کورٹ کو پیش کی ہے ۔ جو کالا دھن پر روک لگانے کے اقدامات کا حصہ ہے ۔ تحقیقاتی ٹیم نے کہا کہ چونکہ کالا دھن زیادہ تر نقد رقم کی شکل میں ہے اس لیے نقد لین دین پر کوئی اعظم ترین حد ہونی چاہئے ۔ خصوصی ٹیم نے مختلف ممالک کے قواعد اور قوانین کا جائزہ لینے کے بعد یہ سفارشات پیش کی ہیں ۔۔

TOPPOPULARRECENT