Monday , October 23 2017
Home / ہندوستان / ۔55ہزار دیہات موبائیل دائرہ کار میں نہیں

۔55ہزار دیہات موبائیل دائرہ کار میں نہیں

نئی دہلی ۔ 7اگست ( سیاست ڈاٹ کام) تقریباً ہندوستان کے 55ہزار دیہات ایسے ہیں جو موبائیل فون کے دائرے کار میں شامل نہیں ہیں ۔ ایسے دیہاتوں کی اعظم ترین تعداد ریاست اڈیشہ میں ہے ۔پارلیمنٹ کو آج اس کی اطلاع دی گئی ۔ایک تخمینہ کے بموجب ملک میں تقریباً 55ہزار دیہات ایسے ہیں جو موبائیل ٹیلی فونس کے دائرے کار میں شامل نہیں ہیں ۔ ان دیہاتوں میں امکان ہے کہ موبائیل خدمات بتدریج فراہم کی جائیں گی ۔ بشرطیکہ مالی وسائل دستیاب ہوں ۔ وزیر مملکت برائے مواصلات منوج سنہا نے راجیہ سبھا میں ایک سوال کا تحریری جواب دیتے ہوئے کہا کہ حکومت نے موبائیل خدمات کی فراہمی کو اپنی ترجیحات میں شامل کرلیا ہے ۔ بایاں بازو کی انتہا پسندی متاثرہ علاقوں ‘ شمال مشرقی ہند کی ریاستوں ‘ جزائر اور ہمالیائی ریاستیں جیسے جموں و کشمیر ‘ اتراکھنڈ اور ہماچل پردیش میں موبائیل خدمات مرحلہ وار انداز میں پہلے مرحلے میں فراہم کی جائیں گی ۔ سب سے زیادہ دیہاتوں کی تعداد اڈیشہ میں ہے جہاں یہ تعداد 10398 ہے ‘ اس کے بعد جھارکھنڈ کا مقام ہے

جہاں ایسے 5949دیہات ہیں ‘مدھیہ پردیش میں 5926 ‘ چھتیس گڑھ میں 4041 ‘ آندھراپردیش میں 3812 ایسے دیہات ہیںکرناٹک ‘ کیرالا اور پوڈیچیری میں موبائیل سرویس سے محروم دیہات نہیں ہیں ۔ مرکزی وزیر نے کہا کہ 581183 آبادی والے دیہات 593601 غیرآباد دیہاتوں میں شامل ہیں یعنی ان کی تعداد ملک میں 97.9 فیصد ہے ۔ 2011ء کی مردم شماری کے اعداد و شمار کے بموجب دیہات پبلک ٹیلیفون عالمی خدمات ذمہ داری فنڈ کی مالی مدد سے فراہم کئے گئے ہیں ۔ 76403.7 دیہاتوں کو عالمی رسائی لیوی اور 3114719 کروڑ دیہاتوں کیلئے 30جون 2016کا نشانہ مقرر کیا گیا تھا ۔ ایک علحدہ جواب میں مسٹر سنہا نے کہا کہ 400نئے برانچ پوسٹ آفس موجودہ منصوبہ کی مدت میں قائم کئے جائیں گے ۔ 344 2012-13 سے 2015 – 16 کی مدت کے دوران دوبارہ کھولے جاچکے ہیں ۔ وہ لوک سبھا میں سوالات کے تحریری جواب دے رہے تھے ۔

TOPPOPULARRECENT