Friday , September 22 2017
Home / ہندوستان / ۔83 لاکھ افراد نے ایل پی جی سبسیڈی ترک کردی

۔83 لاکھ افراد نے ایل پی جی سبسیڈی ترک کردی

تین سال میں پانچ کروڑ کنکشن، وزیر پٹرولیم پردھان کا بیان
نئی دہلی 9 مارچ (سیاست ڈاٹ کام) سبسیڈی کے ڈھانچہ میں اصلاحات کے عہد کا اعادہ کرتے ہوئے وزیر پٹرولیم دھرمیندر پردھان نے آج بتایا کہ اب تک 83 لاکھ افراد نے رضاکارانہ طور پر ایل پی جی سبسیڈی ترک کردی۔ جب ان سے پوچھا گیا کہ کیا حکومت سبسیڈی کا بوجھ کم کرنے کے لئے کریت پاریکھ کمیٹی کی سفارشات کو قبول کرے گی، پردھان نے بتایا کہ وزیراعظم نے پہلے ہی خوشحال طبقہ سے خواہش کی ہے کہ وہ ایل پی جی سبسیڈی ترک کردیں۔ انھوں نے کہاکہ وزیراعظم نریندر مودی نے گزشتہ سال مارچ میں یہ مہم شروع کی تھی اور اب تک 83 لاکھ افراد بشمول متوسط طبقہ اور سبکدوش ملازمین نے رضاکارانہ طور پر ایل پی جی سبسیڈی حاصل نہ کرنے کا فیصلہ کیا ہے۔ پردھان نے کہاکہ ہمارا یہ واضح موقف ہے کہ سبسیڈی انھیں ملنی چاہئے جو مستحق ہوں اور ہم اس ضمن میں اصلاحات کے پابند عہد ہیں۔ جب ان سے سوال کیا گیا کہ قدرتی گیس کی قیمت میں کمی کا فائدہ کیا صارفین کو پہنچایا جارہا ہے انھوں نے جواب دیا ایل پی جی سیلنڈرس پر پہلے ہی سبسیڈی دی جارہی ہے۔ انھوں نے بتایا کہ حکومت آئندہ تین سال یعنی 2018-19 ء تک سطح غربت سے نیچے زندگی گزارنے والوں کو خواتین کے نام پر رعایتی قیمت پر پانچ کروڑ ایل پی جی کنکشن فراہم کرے گی۔

پارلیمنٹ کے روبرو خودسوزی کی دھمکی
نئی دہلی 9 مارچ (سیاست ڈاٹ کام) ایک درمیانی عمر کے آدمی نے آج پارلیمنٹ ہاؤز کے قریب خودسوزی کی دھمکی دی جس کی وجہ سے سکیوریٹی عہدیداروں کو پریشان کن حالات کا سامنا کرنا پڑا۔ اس شخص کی ہری سنگھ کی حیثیت سے شناخت کی گئی جو ہریانہ کا ساکن ہے۔ اس نے پولیس کو بتایا کہ وہ اپنی بہن اور بھانجہ کے قاتلوں سے انصاف چاہتا ہے۔ پولیس نے فوری دبوچ لیا اور پوچھ تاچھ کے لئے پولیس اسٹیشن لے گئی۔ اس وقت وجئے چوک پر میڈیا کے نمائندوں کو اس نے بتایا کہ اس کے برادر نسبتی بھی اس وقت ہریانہ کے موضع میں پانی کی ٹینک سے چھلانگ لگاکر خودکشی کررہا ہے لیکن دہلی پولیس اس دعویٰ کی جانچ کررہی ہے۔

TOPPOPULARRECENT