Tuesday , September 26 2017
Home / ہندوستان / نابالغ لڑکی کی عصمت ریزی ‘ مہاراشٹرا اسمبلی میں ہنگامہ

نابالغ لڑکی کی عصمت ریزی ‘ مہاراشٹرا اسمبلی میں ہنگامہ


ممبئی 18 جولائی ( سیاست ڈاٹ کام ) احمد نگر ضلع میں ایک نابالغ لڑکی کی عصمت ریزی اور قتل کے بہیمانہ واقعہ پر مہاراشٹرا اسمبلی اور کونسل میں زبردست ہنگامہ آرائی ہوئی جب دونوں ایوانوں کے مانسون سشن کا آج آعاز ہوا ۔ اپوزیشن کانگریس ۔ این سی پی نے اس واقعہ اور دیگر کئی مسائل پر دیویندر فرنویس حکومت کو سخت تنقید کا نشانہ بنایا ہے ۔ تفصیلات کے بموجب گذشتہ ہفتے احمد نگر ضلع میں ایک 15 سالہ لڑکی کی بہیمانہ عصمت ریزی کی گئی تھی اور پھر اس کا قتل کردیا تھا ۔ یہ جرم تین افراد نیکیا تھا جنہوں نے اس لڑکی کے سارے جسم کو زخمی کردیا تھا اور اس کی ہڈیاں بھی توڑ دی تھیں ۔ اس واقعہ پر ریاست بھر میں ہنگامہ آرائی ہوئی اور کئی گوشوں سے اس کی مذمت کی گئی تھی ۔ اپوزیشن کی ہنگامہ آرائی کے بعد اسمبلی میں ایک بیان دیتے ہوئے چیف منسٹر فرنویس نے کہا کہ اس سنگین جرم کے مرتکبین کو گرفتار کرلیا گیا ہے اورا س کیس کو ایک فاسٹ ٹریک عدالت کے سپرد کیا جائیگا ۔ معروف وکیل اجول نکم کو اس کیس میں پبلک پراسکیوٹر نامزد کیا گیا ہے اور وہ پیروی کرینگے ۔

TOPPOPULARRECENT