Monday , July 24 2017
Home / شہر کی خبریں / تلنگانہ کا بجٹ 2017-18 ۔ اہم جھلکیاں

تلنگانہ کا بجٹ 2017-18 ۔ اہم جھلکیاں

n کے سی آر کٹ کیلئے 605کروڑ روپئے مختص n حاملہ خواتین کو تین مراحل میں 12ہزار روپئے n لڑکی تولد ہونے پر زائد 1ہزار روپئے

n فیس ریمبرسمنٹ کیلئے 1939 کروڑ روپئے n کلیان لکشمی ‘ شادی مبارک اسکیم کیلئے 75,116کروڑ روپئے مختص

n جی ایچ ایم سی کیلئے 1000کروڑ روپئے n عثمانیہ یونیورسٹی صدی تقاریب کیلئے 200کروڑ روپئے n مشن بھگیرتا کیلئے 3000کروڑ روپئے

حیدرآباد ۔ 13مارچ ( سیاست نیوز) تلنگانہ کے آج پیش کردہ بجٹ برائے مالی سال 2017 -18ء میں زرعی شعبہ کی ترقی کیلئے 5942 کروڑ ‘ محکمہ آبپاشی کیلئے 23675کروڑ روپئے ‘ ‘ ایم بی سی ( بہت ہی زیادہ پسماندہ طبقات) کی فلاح و بہبود کیلئے 1000کروڑ روپئے ‘ کلیان لکشمی ‘ شادی مبارک اسکیم کیلئے 75,116 روپئے فراہم کرنے ‘ خواتین و اطفال کی بہبود کیلئے 1731 کروڑ روپئے ‘ بی سی ویلفیر کیلئے 5070 کروڑ روپئے ‘ اقلیتی طبقہ کی فلاح و بہبود کیلئے 1249کروڑ روپئے ‘ آسرا پنشن کیلئے 5330کروڑ روپئے ‘ فیس ری ایمبرسمنٹ کیلئے 1939 کروڑ روپئے ‘ ہینڈلوم ورکرس کیلئے 1200 کروڑ روپئے ‘ کسانوں کے قرض معافی سے متعلق آخری قسط کیلئے 4000کروڑ روپئے ‘ تعلیمی شعبہ کی ترقی کیلئے 12705 کروڑ روپئے ‘ محکمہ صحت و طبابت کیلئے 5976 کروڑ روپئے ‘ محکمہ پنچایت راج کیلئے 14723 کروڑ روپئے ‘ شہری ترقیات کیلئے 5599کروڑ روپئے ‘ مشن بھگیرتا کیلئے 3000 کروڑ روپئے ‘ شاہراہوں کی ترقی کیلئے 5033کروڑ روپئے ‘ مختلف کارپوریشنوں کیلئے 400کروڑ روپئے ‘ گریٹر ورنگل میونسپل کارپوریشن کیلئے 300کروڑ روپئے ‘ گریٹر حیدرآباد میونسپل کارپوریشن کیلئے 1000کروڑ روپئے ‘ صحیفہ نگاروں کی فلاح و بہبود کیلئے 30کروڑ روپئے ‘ عثمانیہ یونیورسٹی صدی تقاریب کیلئے 200کروڑ روپئے ‘ سیاحت و تہذیبی اُمور محکمہ کیلئے 198کروڑ روپئے ‘ امن و ضبط کی برقراری کیلئے محکمہ پولیس کو 4828 کروڑ روپئے ‘ انفارمیشن ٹکنالوجی شعبہ کیلئے 252کروڑ روپئے ‘ ہریتا ہارم کیلئے 50کروڑ روپئے ‘ محکمہ توانائی کیلئے 4203 کروڑ روپئے ‘ صنعتی شعبہ کیلئے 985کروڑ روپئے ‘ شیڈولڈ کاسٹس طبقات کی بہبود کیلئے 14375 کروڑ روپئے مختص کئے گئے ۔ وزیر موصوف نے کہا کہ کے سی آر کٹ کیلئے 605کروڑ روپئے مختص کئے گئے ‘ سرکاری دواخانوں میں حاملہ خواتین کی زچگی کی صورت میں انہیں تین مرحلوں میں 12ہزار روپئے فراہم کئے جائیں گے ۔ لڑکی تولد ہونے کی صورت میں ایک ہزار روپئے زائد دیئے جائیں گے ۔

Leave a Reply

TOPPOPULARRECENT