Sunday , September 23 2018
Home / کھیل کی خبریں / آئرلینڈ کو ہرا کر انڈیا گروپ B کا فاتح، دھونی کی ٹیم کا نیا ریکارڈ

آئرلینڈ کو ہرا کر انڈیا گروپ B کا فاتح، دھونی کی ٹیم کا نیا ریکارڈ

ہیملٹن ، 10 مارچ (سیاست ڈاٹ کام) شکھر دھون نے شاندار سنچری بنائی جبکہ لگاتار کامیاب پیش رفت کرنے والے ہندوستان نے آج آئرلینڈ کو آٹھ وکٹوں سے واضح شکست دیتے ہوئے گروپ B ٹیبل میں ٹاپ پوزیشن پر اپنی مہر ثبت کردی اور اس کے ساتھ لگاتار نواں آئی سی سی کرکٹ ورلڈ کپ میچ جیت کر اپنا نیا ریکارڈ قائم کیا۔ آئرلینڈ کے قابل لحاظ اسکور 259 کا تعاقب کرت

ہیملٹن ، 10 مارچ (سیاست ڈاٹ کام) شکھر دھون نے شاندار سنچری بنائی جبکہ لگاتار کامیاب پیش رفت کرنے والے ہندوستان نے آج آئرلینڈ کو آٹھ وکٹوں سے واضح شکست دیتے ہوئے گروپ B ٹیبل میں ٹاپ پوزیشن پر اپنی مہر ثبت کردی اور اس کے ساتھ لگاتار نواں آئی سی سی کرکٹ ورلڈ کپ میچ جیت کر اپنا نیا ریکارڈ قائم کیا۔ آئرلینڈ کے قابل لحاظ اسکور 259 کا تعاقب کرتے ہوئے اوپنر دھون (85 گیندوں میں 100 رنز) نے آئرش بولروں کی پٹائی کرتے ہوئے اپنی آٹھویں او ڈی آئی سنچری مکمل کی جس کی مدد سے ڈیفنڈنگ چمپینس 36.5 اوورس میں ہی ٹارگٹ تک پہنچ گئے جو جاریہ ٹورنمنٹ میں اُن کی مسلسل پانچویں کامیابی ہے۔ روہت شرما (64، 66 گیندیں) کی رفاقت میں دھون نے اوپننگ وکٹ کیلئے ریکارڈ 174 رنز جوڑے جو اچھی بنیاد ثابت ہوئی اور ہندوستان نے گروپ B میں پانچ مقابلوں سے 10 پوائنٹس کے ساتھ ٹاپ پوزیشن حاصل کرلی۔

جہاں دھون نے اپنی اننگز میں 11 چوکے اور 5 چھکے لگائے، وہیں روہت کی اس ٹورنمنٹ میں دوسری ہاف سنچری تین چوکوں اور تین بلامشقت چھکوں سے مزین رہی۔ یہ میچ ’نیلے کپڑے والوں‘ کیلئے کچھ توسیعی بیٹنگ پریکٹس سیشن ثابت ہوا جبکہ انھوں نے سورو گنگولی زیرقیادت ٹیم کا 2003ء میں قائم کردہ مسلسل آٹھ میچز جیتنے کا سابقہ ریکارڈ توڑ ڈالا۔ ہندوستان کا 9 میچ کا ریکارڈ 2011ء میں ویسٹ انڈیز کے خلاف چینائی میں منعقدہ اُن کے گروپ لیگ میچ سے شروع ہوا تھا۔ یوں تو 260 کا ٹارگٹ ہندوستان کی طاقتور بیٹنگ لائن اپ کیلئے کوئی کٹھن کام نہیں، لیکن سیڈن پارک کی بے جان وکٹ نے ناتجربہ کار آئرش پیسرز کیلئے مزید مشکل پیدا کردی۔ ’اِن فام‘ دھون نے جو ’مین آف دی میچ‘ قرار پائے، حملے کی شروعات کی اور اُن کی دوسری ورلڈ کپ سنچری 84 گیندوں میں بن گئی مگر وہ فوری بعد آؤٹ ہوگئے جب حریف کپتان ولیم پورٹرفیلڈ نے پیچھے کی طرف دوڑتے ہوئے عمدہ کیچ مکمل کیا۔

روہت نے دھون جیسے پے در پے اسٹروکس نہیں کھیلے لیکن پھر بھی اپنی ہاف سنچری 49 گیندوں میں پوری کرگئے۔ اختتامی مراحل میں ویراٹ کوہلی (44 ناٹ آؤٹ) اور اجنکیا رہانے (33 ناٹ آؤٹ) نے تیسری وکٹ کیلئے 70 رنز کی پارٹنرشپ کے ساتھ ضابطے کی تکمیل کی۔ ہندوستان اپنے آخری گروپ لیگ میچ میں زمبابوے سے 14 مارچ کو آکلینڈ کے ایڈن پارک میں کھیلے گا۔ قبل ازیں ہندوستانی بولروں نے کچھ بے استقلال شروعات کے بعد اپنا ردھم حاصل کرلیا اور پُرجوش آئرلینڈ کو 49 اوورس میں 259 پر آل آؤٹ کردیا جبکہ خود انھوں نے پہلے بیٹنگ کا انتخاب کیا تھا۔ ایک مرحلے پر آئرلینڈ کا اسکور 206/3 تھا لیکن ہندوستانیوں نے شاندار واپسی کرکے حریفوں کی اننگز کو جلدی ختم کردیا، جیسا کہ چھ وکٹیں 6.3 اوورس کے وقفے میں 32 رنز کے عوض گرگئے۔ ایک حیران کن ریکارڈ ہے کہ ہندوستان نے اب اپوزیشن کو لگاتار پانچویں مرتبہ آل آؤٹ کیا ہے۔ نیل اوبرائن فی گیند رن کی شرح پر 75 کے ساتھ ٹاپ اسکورر رہے جبکہ کپتان پورٹرفیلڈ نے صبرآزما 67 رنز 93 گیندوں میں بنائے۔ آئرلینڈ کو مڈل اور لوور آرڈر کے بکھراؤ نے مایوس کیا جبکہ روی چندرن اشوین (2/38) سب سے متاثرکن ہندوستانی بولر ثابت ہوئے حالانکہ محمد سمیع (3/41) نے زیادہ وکٹیں لئے۔ اومیش یادو (1/34) اور سریش رائنا (1/40) کو بھی وکٹ ملی۔

TOPPOPULARRECENT