Sunday , February 25 2018
Home / شہر کی خبریں / آئندہ انتخابات میں تلنگانہ سے کانگریس کا صفایا

آئندہ انتخابات میں تلنگانہ سے کانگریس کا صفایا

کانگریس عوام کی نظروں سے اوجھل ، گورنمنٹ وہپ پی راجیشور ریڈی کا بیان
حیدرآباد۔ /9 فبروری، ( سیاست نیوز) گورنمنٹ وہپ پی راجیشور ریڈی نے کہا کہ کانگریس قائدین کو تلنگانہ عوام فراموش کرچکے ہیں اور آئندہ انتخابات میں کانگریس پارٹی کا تلنگانہ سے صفایا یقینی ہے۔ میڈیا کے نمائندوں سے بات چیت کرتے ہوئے راجیشور ریڈی نے کہا کہ کانگریس قائدین ترقیاتی اور فلاحی اسکیمات میں رکاوٹ کے ذریعہ عوام کی برہمی کو دعوت دے رہے ہیں۔ ہر ترقیاتی کام میں رکاوٹ پیدا کرنا کانگریس قائدین کی عادت بن چکی ہے۔ انہوں نے کہا کہ کانگریس کے جو قائدین حکومت پر الزام تراشی کررہے ہیں ان کا عوام میں کوئی وزن نہیں ہے۔ کانگریس قائدین سڑک کے روڈی کی زبان میں گفتگو کررہے ہیں۔ انہوں نے دس سالہ دورحکومت میں تلنگانہ کی ترقی پر کوئی توجہ مبذول نہیں کی۔ انہوں نے کہا کہ کانگریس پارٹی نے اپنے 6 دہائی پر مشتمل اقتدار میں آبپاشی پراجکٹس پر کوئی توجہ نہیں دی۔ ترقیاتی اسکیمات کے فنڈز کو قائدین نے بدعنوانیوں کے ذریعہ ہضم کرلیا۔ انہوں نے کہا کہ مشن بھگیرتا کی کامیابی سے کانگریس قائدین بوکھلاہٹ کا شکار ہیں۔ اس اسکیم کے تحت ہر گھر کو صاف پینے کے پانی کی سربراہی کا منصوبہ ہے۔ کسانوں کو 24 گھنٹے مفت برقی سربراہ کرنے والی تلنگانہ ملک کی واحد ریاست ہے۔ انہوں نے کہا کہ نوجوانوں کو روزگارکی فراہمی کے اقدامات کئے گئے۔آبپاشی پراجکٹس کی تکمیل میں کالیشورم پراجکٹ اہمیت کا حامل ہے۔ چیف منسٹر کے چندر شیکھرراؤ نے تمام زرعی اراضیات کو پانی سیراب کرنے کا عہد کیا ہے اور اس کی بہر صورت تکمیل ہوگی۔ انہوں نے کانگریس پارٹی سے متعلق کے ٹی راما راؤ کے ریمارک کی تائید کی اور کہا کہ کانگریس نے کبھی بھی عوام کی بھلائی پر توجہ نہیں کی ہے۔ انہوں نے کہا کہ تلنگانہ تحریک میں کانگریس پارٹی کا کوئی رول نہیں رہا۔ ٹی آر ایس نے کے سی آر کی قیادت میں 14 برس تک جدوجہد کرتے ہوئے علحدہ ریاست تلنگانہ حاصل کی ہے۔ مرکزی حکومت کو جدوجہد اور عوامی طاقت کے آگے جھکنا پڑا۔ ریاست کی تشکیل کے بعد کانگریس قائدین علحدہ ریاست کی منظوری کیلئے کریڈٹ حاصل کرنے کی کوشش کررہے ہیں۔ انہوں نے کہا کہ کانگریس قائدین کو ہمیشہ عہدوں کی سیکورٹی اور انہیں عوامی بھلائی سے کوئی دلچسپی نہیں رہی۔ انہوں نے کہا کہ ٹی آر ایس کے قائدین اور وزراء مسلسل عوام کے درمیان رہ کر مسائل کی یکسوئی کررہے ہیں۔ راجیشور ریڈی نے آبپاشی پراجکٹس میں بے قاعدگیوں کے الزامات کومسترد کردیا اور کہا کہ اگر اس سلسلہ میںکوئی ثبوت ہو تو اسے پیش کیا جائے ۔

TOPPOPULARRECENT