Wednesday , December 12 2018

آئندہ انتخابات میں تلگو دیشم کی کانگریس سے مفاہمت پر خود کشی کا اعلان

کانگریس لا اعتبار پارٹی ، ڈپٹی چیف منسٹر اے پی کے ای کرشنا مورتی کا بیان
حیدرآباد ۔ /6 جون (سیاست نیوز) ڈپٹی چیف منسٹر آندھراپردیش مسٹر کے ای کرشنا مورتی نے سنسنی خیز بیان دیتے ہوئے کہا کہ تلگودیشم پارٹی اگر آئندہ انتخابات کے موقعہ پر کانگریس پارٹی سے مفاہمت کرے گی تو وہ خودکشی کرلینے کیلئے تیار ہیں ۔ آج کرنول میں ضلع تلگودیشم پارٹی آفس میں اخباری نمائندوں سے بات چیت کرتے ہوئے مسٹر کے ای کرشنا مورتی نے کہا کہ کانگریس پارٹی ناقابل بھروسہ پارٹی ہے اور فی الوقت ریاست آندھراپردیش میں کانگریس پارٹی کا موقف نہیں کے برابر ہے ۔ لہذا کانگریس پارٹی سے تلگودیشم پارٹی انتخابی مفاہمت کرنے کی صورت میں وہ خودکشی کرلینے سے بھی گریز نہیں کریں گے ۔ انہوں نے وائی ایس آر کانگریس پارٹی کو سخت تنقید کا نشانہ بناتے ہوئے کہا کہ محض دکھاوے کیلئے ہی وائی ایس آر کانگریس پارٹی ارکان پارلیمان نے لوک سبھا کی رکنیت سے استعفی دیتے ہوئے مکتوبات استعفے اسپیکر لوک سبھا کو پیش کئے ۔ مسٹر کے ای کرشنا مورتی ڈپٹی چیف منسٹر آندھراپردیش نے مزید کہا کہ صدر جنا سینا پارٹی مسٹر پون کلیان اور صدر وائی ایس آر کانگریس پارٹی وائی ایس جگن موہن ریڈی مرکزی حکومت کے ساتھ خفیہ گٹھ جوڑ کرلینا انتہائی تکلیف دہ بات ہے ۔ ریاست کی ترقی کا تذکرہ کرتے ہوئے ڈپٹی چیف منسٹر نے چیف منسٹر آندھراپردیش مسٹر این چندرا بابو نائیڈو کی زبردست ستائش کرتے ہوئے کہا کہ ریاست کی ترقی کیلئے مرکزی حکومت سے تعاون حاصل نہ ہونے کے باوجود چیف منسٹر ریاست آندھراپردیش کو تیز رفتار ترقی کی سمت گامزن کررہے ہیں ۔ انہوں نے مزید کہا کہ انتخابی مفاہمت کے تعلق سے انتخابات کے موقع پر ہی غور کیا جائے گا۔

TOPPOPULARRECENT