Sunday , September 23 2018
Home / شہر کی خبریں / آئندہ انتخابات میں ٹی آر ایس کو دوبارہ اقتدار

آئندہ انتخابات میں ٹی آر ایس کو دوبارہ اقتدار

نگرانکار چیف منسٹر کے سی آر کی پیش قیاسی کی تصدیق، لکشماریڈی کا بیان
حیدرآباد ۔15 ستمبر (سیاست نیوز) کارگذار وزیرصحت تلنگانہ لکشماریڈی نے کہا کہ آئندہ انتخابات میں ٹی آر ایس دوبارہ برسراقتدار آئے گی۔ سروے رپورٹس نگران کار چیف منسٹر کے سی آر کے دعوؤں کی تصدیق کررہے ہیں۔ لکشماریڈی نے میڈیا سے بات چیت کرتے ہوئے کہا کہ سربراہ ٹی آر ایس کے سی آر نے ٹی آر ایس کو 100 اسمبلی حلقوں میں کامیابی کا دعویٰ کیا تھا، جس پر اپوزیشن جماعتوں نے مذاق اڑایا تھا۔ تاہم انڈیا ٹوڈے کے سروے میں انکشاف ہوگیا کہ ٹی آر ایس کو 51 فیصد سے زائد ووٹ حاصل ہوں گے۔ چیف منسٹر کے پسندیدہ امیدواروں کے سروے میں کے سی آر کانگریس کے صدر اتم کمار ریڈی سے 28 فیصد آگے ہیں۔ حکومت کی کارکردگی سے ریاست کے عوام مطمئن ہیں اور دوبارہ ٹی آر ایس کو اقتدار سونپنے کیلئے انتخابات کا بڑی بے چینی سے انتظار کررہے ہیں۔ انڈیا ٹوڈے کے سروے میں انکشاف ہوا ہیکہ کانگریس، تلگودیشم اور دوسری جماعتیں اقتدار کی دوڑ میں شامل نہیں ہے۔ ڈاکٹر لکشماریڈی نے کہا کہ تنہا مقابلہ کرتے ہوئے اپوزیشن جماعتیں ٹی آر ایس کو شکست نہیں دے سکتی ہے۔ اگر عظیم اتحاد بھی تشکیل دیا جاتا ہے تو تمام جماعتیں مل کر بھی ٹی آر ایس کو شکست نہیں دے سکتی۔ کارگذار وزیرصحت نے کہا کہ اتحاد قائدین کے مابین ہورہا ہے مگر ٹی آر ایس کا اتحاد عوام کے ساتھ ہے۔ انہوں نے کہا کہ عظیم اتحاد میں شامل جماعتوں اور قائدین پر تلنگانہ کے عوام کو بھروسہ نہیں ہے۔ 2014ء سے ابھی تک ریاست میں جتنے بھی انتخابات منعقد ہوئے ہیں ہر انتخاب میں ٹی آر ایس نے کامیابی حاصل کی ہے۔ لکشماریڈی نے کہا کہ کے سی آر کی قیادت میں تلنگانہ ترقی اور فلاح و بہبود کے معاملے میں سارے ملک میں سرفہرست ہے۔ 40 ہزار کروڑ روپئے فلاحی اسکیمات پر خرچ کئے جارہے ہیں۔ ریاست میں کئی متاثرکن اسکیمات متعارف کرائی گئی ہیں جس کی ملک کے دوسری ریاستیں تقلید کررہی ہیں۔

TOPPOPULARRECENT