Tuesday , February 20 2018
Home / شہر کی خبریں / آئندہ ماہ اسمبلی سیشن ،نئے پنچایت راج بل کی منظوری کے ٹی آر کیلئے ایک بڑا چیلنج

آئندہ ماہ اسمبلی سیشن ،نئے پنچایت راج بل کی منظوری کے ٹی آر کیلئے ایک بڑا چیلنج

حیدرآباد /5 فروری ( سیاست نیوز ) تلنگانہ حکومت نے ٹی آر ایس پارٹی کو مستحکم اور طاقتور ثابت کرنے اور پارٹی قائدین میں شعور بیداری کیلئے اس مرتبہ نئے پنچایت راج کی تشکیل عمل میں لارہی ہے جس کے بل کو مارچ میں منعقد شدنی اسمبلی اجلاس میں منظوری دی جائے گی ۔ مجوزہ بل کے تحت جدید 4 ہزار نئے پنچایتوں کی شمولیت عمل میں آئے گی ۔ اس نئے پنچایت راج کو جوابدہ اور موثر و مستحکم کرنے کیلئے کے ٹی آر وزیر پنچایت راج ایک چیلنج کے طور پر اس کا بیڑا اٹھائے ہیں ۔ عوام اس مرتبہ سوچ سمجھ کر اپنا قیمتی ووٹ استعمال کرسکتے ہیں ۔ چیف منسٹر کے چندرا شیکھر راؤ کو گذشتہ کئی ماہ سے سوشیل میڈیا پر جاری سروے رپورٹ سے کافی الجھن اور دشواریوں کا سامنا کرنا پڑ رہا ہے ۔ اس کے سبب انہوں نے ہر دن انٹلی جنس کی رپورٹ طلب کرتے ہوئے مقامی سیاسی قائدین کے کام کاج پر نظر رکھے ہوئے ہیں اور لیڈروں کو اس بات کی بھی تاکید کی کہ وہ عوام سے دوستانہ تعلقات قائم کریں اور سنجیدگی کے ساتھ اپنے فرائض انجام دیتے ہوئے زیادہ تر وقت عوام کے درمیان گذارے ۔ گذشتہ ایک ہفتہ قبل عثمانیہ یونیورسٹی کے طلبہ نے ایک سروے رپورٹ کو سوشیل میڈیا کے ذریعہ ریاست بھر میں پھیلاتے ہوئے اس بات کا انکشاف کیا کہ آئندہ عوامی انتخابات میں ٹی آرا یس کو 40-45 نشستیں حاصل ہوں گے ۔ اس وجہ سے کے سی آر نے فوری طور پر نئے پنچایت راج کی تشکیل عمل میں لاتے ہوئے مارچ کے پہلے ہفتے میں اسمبلی میں اس بل کو منظور کرنے جارہے ہیں تاکہ اس کے نتائج کے ذریعہ وہ اپنی طاقت مضبوط کرسکیں ۔ واضح رہے کہ پنچایت راج کے نتائج آنے والے ا سمبلی الیکشن کے نتائج پر اثرار انداز ہوں گے ۔

TOPPOPULARRECENT