Saturday , September 22 2018
Home / اضلاع کی خبریں / آئندہ چار معیادوں تک اقتدار پر ٹی آر ایس کا قبضہ

آئندہ چار معیادوں تک اقتدار پر ٹی آر ایس کا قبضہ

کریم نگر /16 اپریل ( سیاست ڈسٹرکٹ نیوز ) تلنگانہ چیف منسٹر کے چندر شیکھر راو منصوبہ بند کاویشیں پوری ہوجانے پر آنے والے 20 برس تک ٹی آر ایس کا اقتدار برقرار رہے گا ۔ ریاستی وزیر بھاری آبپاشی ہریش راؤ نے پیشن گوئی کی ۔ ریکرتی کے راجہ سری گارڈن میں منعقدہ ضلع صدارتی عہدہ انتخابی پروگرام سے وہ خطاب کر رہے تھے ۔ انہوں نے کہا کہ اندرون چار سا

کریم نگر /16 اپریل ( سیاست ڈسٹرکٹ نیوز ) تلنگانہ چیف منسٹر کے چندر شیکھر راو منصوبہ بند کاویشیں پوری ہوجانے پر آنے والے 20 برس تک ٹی آر ایس کا اقتدار برقرار رہے گا ۔ ریاستی وزیر بھاری آبپاشی ہریش راؤ نے پیشن گوئی کی ۔ ریکرتی کے راجہ سری گارڈن میں منعقدہ ضلع صدارتی عہدہ انتخابی پروگرام سے وہ خطاب کر رہے تھے ۔ انہوں نے کہا کہ اندرون چار سال ہر گھر میں واٹر گرڈ کے ذریعہ پینے کے پانی کی سربراہی کو یقینی بنالیا جائے گا ۔ مشن کاکتیہ کے ذریعہ تالابوں کی مرمت کی جاکر ان سے آبپاشی کی ضرورت پوری کرلی جائے گی ۔ ترقیاتی پروگراموں سے ہر گھر استفادہ کرسکے ، کام کیا جارہا ہے ۔ حکومت کی موثر منصوبہ بند ترقیاتی پروگراموں کی عمل آوری کو دیکھتے ہوئے کانگریس اور تلگودیشم کو پسینہ چھوٹ رہا ہے ۔ اسی لئے الٹے سیدھے بیانات دے رہے ہیں ۔ کل تک تلنگانہ کے قیام میں رکاوٹ پیدا کی تھی ۔ آج وہی کانگریس اور ٹی ڈی پی قائدین ترقیاتی پروگرام کی عمل آوری میں رکاوٹ پیدا کر رہے ہیں ۔ انہوں نے کہا کہ 14 سال تک جدوجہد کرکے جس طرح تلنگانہ حاصل کیا ہے اسی روش پر چلتے ہوئے سنہرے تلنگانہ ، ترقیاتی پروگراموں کی موثر عمل آوری کیلئے حکومت کوشاں ہیں ۔ انہوں نے کہا کہ 27 کو حیدرآباد میں منعقد کئے جانے والے ٹی آر ایس پلیمنری اجلاس میں بھاری اکثریت سے شرکت کریں ۔ انہوں نے کہاکہ دس ماہ سڑکوں کی درستگی ، ترقی پر حکومت 15 کروڑ روپئے خرچ کرچکی ہے اور 24 کو منعقد شدنی پارٹی کے وسیع تر اجلاس میں ضلع سے 300 قائدین کو شریک ہونا ہے ۔ 27 کو منعقد کئے جانے والے پلیمنری میں لاکھوں کی تعداد میں شرکت کریں ۔ مزید کئی ترقیاتی پروگراموں کے ساتھ عوام کے سامنے کھڑے رہنے کی کوشش کی جارہی ہے ۔ غریبی کو دور کرنے اور خوشحالی لانے کیلئے حکومت ممکنہ کوشش کی جارہی ہے ۔ ریاستی وزیر پنچایت راج و آئی ٹی کے ٹی آر نے اپنے خطاب میں کیا ۔ انہوں نے مزید کہا کہ حکومت کی کامیابی کی ضامن ، ترقیاتی پروگرام کی موثر عمل آوری ہے ۔ تلنگانہ ریاست ترقی کی دوڑ میں سب سے آگے ہے ۔ تاحال 50 لاکھ کی رکنیت سازی ہوئی ہے ۔ حکومت چیف وہپ کے ایشور نے کہا کہ مستقبل میں ٹی آر ایس ایک انتہائی طاقتور سیاسی پارٹی ہوگی ۔ جس کے مقابل کھڑے رہنے کی کسی میں بھی ہمت نہ ہوگی ۔ چند مخالف سیاسی پارٹیوں کے جھوٹے الزامات کا ٹی آر ایس کے کارکنوں کو منہ توڑ جواب دینا ہوگا ۔ پارٹی کے استحکام کی برقراری کی ذمہداری کارکنوں کے کاندھے پر ہے ۔ ہر کارکرد ذمہ دار کارکن کی نشاندہی کی جاکر پارٹی میں خصوصی مقام عہدہ دیا جائے گا ۔ کریم نگر رکن پارلیمنٹ ونود کمار اور پداپلی رکن پارلیمنٹ بلکا سمن نے اپنے خطاب میں کہا کہ حکومت تعلیم اور طبی شعبہ کی ترقی کو اولین ترجیح دیتے ہوئے خاطر خواہ فنڈز مختص کر رہی ہے ۔ آئندہ دو سال میں برقی سربراہی میں کوئی رکاوٹ نہیں ہوگی۔ رکن اسمبلی آر بالکشن ، جی کملاکر ، جی شوبھا نے اپنے خطاب میں کہا کہ پارٹی کے استحکام کیلئے گھر گھر ترقیاتی اسکیمات کے نتائج لے جاکر کارکنوں کو کوشش کرنی چاہئے ۔ ٹی آر ایس رکنیت سازی مہم انچارج راجیا یادو نے کہا کہ حکومت کی برقراری استحکام کیلئے کارکنوں کا بھرپور تعاون چاہئے ۔ اس موقع پر زیڈ پی چیرپرسن تلااماں ، رکن اسمبلی ستیش بابو ، پی مدھو ، ایس ستیہ نارائنا ، کے ودیاساگر ، سدھاکر ریڈی ، بھانو پرساد راؤ ، مئیر رویندر سنگھ ، ڈاکٹر سنجے کمار ، راجیشم گوڑ ، این لکشمن راؤ وغیرہ موجود تھے ۔

TOPPOPULARRECENT