Wednesday , September 19 2018
Home / ہندوستان / آئی ایس اور القاعدہ کے حملوں کا اندیشہ بے بنیاد

آئی ایس اور القاعدہ کے حملوں کا اندیشہ بے بنیاد

نئی دہلی ۔ 10 ڈسمبر (سیاست ڈاٹ کام) محکمہ سراغ رسانی سے ایسی کوئی اطلاع نہیں ملی جس سے پتہ چلتا کہ القاعدہ اور دولت اسلامیہ کے دہشت گرد گروپ ہندوستانی شہروں کو حملوں کا نشانہ بنانے کی کوشش کررہے ہیں۔ مرکزی وزیر مملکت برائے داخلہ ہری بھائی پارتھی بھائی چودھری نے تاہم کہا کہ 3 ستمبر کو ایک ویڈیو اپالوڈ کیا گیا تھا جس میں القاعدہ کے شیخ ا

نئی دہلی ۔ 10 ڈسمبر (سیاست ڈاٹ کام) محکمہ سراغ رسانی سے ایسی کوئی اطلاع نہیں ملی جس سے پتہ چلتا کہ القاعدہ اور دولت اسلامیہ کے دہشت گرد گروپ ہندوستانی شہروں کو حملوں کا نشانہ بنانے کی کوشش کررہے ہیں۔ مرکزی وزیر مملکت برائے داخلہ ہری بھائی پارتھی بھائی چودھری نے تاہم کہا کہ 3 ستمبر کو ایک ویڈیو اپالوڈ کیا گیا تھا جس میں القاعدہ کے شیخ ایمن الظواہری کی تقریر تھی۔ انہوں نے اعلان کیا تھا کہ القاعدہ کی ایک نئی شاخ برصغیر ہند میں قائم کی جائے گی۔ معلوم ہوا ہیکہ اسیم عمر اور اسامہ محمود امیر اور ترجمان علی الترتیب مقرر کئے گئے ہیں۔ چودھری نے کہا کہ دولت اسلامیہ کے ابوبکر البغدادی کے ویڈیو میں جو 29 جون کو انٹرنیٹ پر اپ لوڈ کیا گیا، مختلف ممالک بشمول ہندوستان نے مسلمانوں کی حالت ظاہرکی گئی تھی اور کہا گیا تھاکہ ان ممالک میں مسلمانوں کے حقوق زبردستی چھینی جارہے ہیں۔ تاہم دونوں تنظیموں کی جانب سے شہر بنگلورو کو کوئی خاص خطرہ ہونے کی محکمہ سراغ رسانی سے اطلاعات نہیں ملی ہیں۔ مرکزی وزیر نے کہا کہ محکمہ سراغ رسانی اور مرکز و ریاستی سطح پر مؤثر اور قریبی ہم آہنگی موجود ہے۔ باہم معلومات کا تبادلہ کیا جاتا ہے۔

محکمہ سراغ رسانی کی اطلاعات کے بموجب متعلقہ ریاستی حکومتوں کو باقاعدہ بنیاد پر خطروں کی اطلاعات اور دہشت گردوں کے امکانی عزائم سے واقف کروایا جاتا ہے۔ کثیر محکمہ جاتی مرکز نے روزانہ 24 گھنٹے کی بنیاد پر سراغ رسانی اطلاعات کی سراغ رسانی محکموں اور ریاستوں کے درمیان تبادلہ کو مستحکم بنایا ہے۔ یہ مرکز روزانہ 24 گھنٹے کام کرتا ہے۔ ریاست اور مرکز کے درمیان معلومات کا بے انتہاء تبادلہ ہوتا ہے۔ اس کے نتیجہ میں فوج میں کئی دہشت گرد شعبوں کا پتہ چلا اور دہشت گرد حملہ کے منصوبوں کو ناکام بنانا ممکن ہوا۔ علاوہ ازیں حکومت ہندوستان کی علاقائی سلامتی اور اس کے عوام کی حفاظت کو یقینی بنانے کئی اقدامات کرچکی ہے۔ قبل ازیں ان اطلاعات سے ملک گر سطح پر دہشت پھیل گئی تھی کہ دولت اسلامیہ اور القاعدہ کے جنگجو ملک کے تمام بڑے شہروں کو بیک وقت دہشت گرد حملوں کا نشانہ بنانے کی سازش کررہے ہیں۔ تمام ریاستوں کی پولیس کو چوکس کردیا گیا تھا۔

TOPPOPULARRECENT